in

حمزہ شہباز کی رہائی لیکن ضمانتی کا وزیراعظم عمران خان کی اہلیہ بشریٰ بی بی سے کیا رشتہ نکلا؟ حیران کن دعویٰ

حمزہ شہباز کی رہائی لیکن ضمانتی کا وزیراعظم عمران خان کی اہلیہ بشریٰ بی بی سے کیا رشتہ نکلا؟ حیران کن دعویٰ

حمزہ شہباز کی رہائی لیکن ضمانتی کا وزیراعظم عمران خان کی اہلیہ بشریٰ بی بی سے …

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن ) مسلم لیگ ن کے رہنماء اور پنجاب اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر حمزہ شہباز شریف کی روبکار جانے ہونے کے بعد گزشتہ شام لاہور کی کوٹ لکھپت جیل سے رہا کردیا گیا اور جلوس کی شکل میں انہیں کوٹ لکھپت جیل سے ماڈل ٹاؤن لے جایا گیا۔اب نجی ٹی وی چینل نے دعویٰ کیا ہے کہ حمزہ شہباز کے ضمانتی وزیراعظم عمران خان کی اہلیہ بشریٰ بی بی کے رشتہ دار ہیں۔

نجی ٹی وی چینل 24 نیوز ایچ ڈی کے مطابق  خاتون اول بشریٰ بی بی کے رشتہ داروں نے حمزہ شہباز کی رہائی میں اہم کردار ادا کیا، بشریٰ بی بی کے کزن مسعود اختر ، بھانجے عدیل علی خان جبکہ مسعود اختر کے داماد ادریس بھٹی نے  لیگی رہنماءحمزہ شہباز کی ضمانت دی، مچلکے جمع کرائے گئے جس کے بعد عدالت عالیہ نے ان کی ضمانت پر رہائی کا حکم دیدیا۔

یاد رہے کہ  حمزہ شہباز کو ہفتہ کی سہ پہرکوٹ لکھپت جیل سے رہا کیا گیا۔ جیل کے باہر مسلم لیگ (ن) کی نائب صدر مر یم نواز نے پارٹی رہنماؤں اور کارکنوں کے ہمراہ حمزہ شہباز کا استقبال کیا جہاں سے دونوں ایک ہی گاڑی میں بیٹھ کر روانہ ہوئے،ان کی گاڑی عطا تارڑ ڈرائیو کررہے تھے، پرویز ر شید بھی موجود تھے۔ مسلم لیگ (ن) کے اراکین اسمبلی اور عہدیداروں کی جانب سے کوٹ لکھپت جیل سے ماڈل ٹاؤن تک مختلف مقامات پر استقبالیہ کیمپ لگائے گئے جہاں پر کا ر کنوں کی کثیر تعداد موجود رہی۔

تمام راستے حمزہ شہباز کی گاڑی پر پھولوں کی پتیاں نچھاور کی گئیں جبکہ اس موقع پر کارکنان قیادت کے حق اور حکومت کیخلاف نعرے بازی بھی کر تے رہے۔ کارکنان حمزہ شہباز کی رہائی کی خوشی میں ڈھول کی تھاپ اور پارٹی ترانوں پر بھنگڑے بھی ڈالتے رہے جبکہ پر مٹھائیاں بھی تقسیم کی گئیں۔اس موقع پر رکن پنجاب اسمبلی عنیزہ فاطمہ بینڈ باجے اور گھوڑے کے ہمراہ حمزہ شہباز کے استقبال کیلئے کوٹ لکھپت جیل پہنچیں جبکہ گھڑ ڈانس کا مظاہرہ بھی کیا گیا،کارکنوں کی کثیر تعداد ہونے کی وجہ سے حمزہ شہبا ز اور ان کے قافلے میں شامل گاڑیاں انتہائی سست رفتاری سے آگے بڑھتی رہیں اور کچا جیل روڈ پر قائم پہلے استقبالیہ تک پہنچتے ہوئے دو گھنٹے سے زائد کا وقت لگ گیا،قبل ازیں شر یف خاندان کے افراد نے کوٹ لکھپت جیل میں حمزہ شہباز سے ملاقات کی، حمزہ شہباز نے جیل میں اپنے والد شہباز شریف سے بھی ملاقات کی۔

الرحمت ہاؤسنگ استقبالیہ کیمپ میں خطاب کرتے ہوئے حمزہ شہباز نے کہا میں رہائی ملنے پر خدا کی ذات کا شکر ادا کرتا ہوں، کیا کبھی کوئی ایسا لیڈر دیکھا ہے جسے یہ معلوم ہو اسے جیل میں ڈال دیا جائیگا لیکن وہ اپنی بیمار بیوی کو بستر مرگ پر چھوڑ کر اپنی بیٹی کا ہاتھ تھام کر ملک واپس آ جائے اور عمران نیازی کے انتقام کا سامنا کرے۔ قوم نے دیکھا حکومت کو بنے ہوئے تین سال ہو گئے لیکن یہ جعلی حکومت ہے،نواز شریف سے شروع ہو کر شہباز شریف،شاہد خاقان عباسی،احسن اقبال،سعد رفیق، سلمان رفیق، حافظ نعمان،حنیف عباسی، رانا ثنا اللہ، حمزہ شہباز کو جیل میں ڈالا، جب کچھ نہیں ملا تو ہیروئن بھی ڈال دی، پوری قوم نے احتساب تماشے کا منطقی انجام دیکھ لیا۔ براڈ شیٹ کا معاملہ ہو تو کاغذ لہراتے ہیں ثبوت مل گئے، روز پاکستانی قوم سے جھوٹ بولتے ہیں، یہ براڈ شیٹ نہیں فراڈ شیٹ ہے، خفیہ ملاقاتیں کی جاتی ہیں، کہا جاتا ہے پاکستانی عوام کے ٹیکسوں سے جمع ہونیوالی دولت آپ کے پاس جمع کرانی ہے او رپھر اس میں سے کمیشن مانگتے ہیں۔

عمران نیازی کے کرائے کے ترجمانوں کی جانب سے کاغذ لہرایا گیا شہباز شریف پکڑا گیا،منی لانڈرنگ ہوئی ہے، لیکن برطانیہ کی عدالت کے سامنے ڈیلی میل کے صحافی کا وکیل کہتا ہے میرے پاس توکوئی ثبوت نہیں، یہ سب انتقام کی باتیں ہیں،عمران نیازی کی انتقام کی آگ ٹھنڈا ہونے کا نام نہیں لے رہی، جب اسے کچھ نہیں ملا تو اس کو غصہ آتا ہے اور وہ غصہ پاکستان کے 22کروڑ عوام پر نکالتا ہے، آج چھٹا ہفتہ ہے آٹے،دال اورچینی کی قیمتوں میں مسلسل اضافہ ہو رہا ہے اور یہ کہتے ہیں صاف چلی شفاف چلی،یہ مفروضوں پر مبنی الزامات لگاتے ہیں او ردوسری طرف دن کی رو شنی میں آٹا اورچینی چو رپکڑ ے جاتے ہیں،کمیٹی بنتی ہے لیکن رپورٹ پر کوئی عملدرآمد نہیں ہوتا۔

ادویات کی قیمتوں میں ساڑھے تین سو فیصد اضافہ کیا گیا، لمحہ فکریہ ہے آٹا،چینی اور ادویات چور کابینہ کا حصہ ہیں، ان جھوٹوں کی دیدہ دلیری دیکھو چوروں کو سا تھ بٹھایا ہوا ہے اور باتیں ریا ست مدینہ کرتے ہیں۔ اللہ تعالیٰ کی لاٹھی بے آواز ہے اس لئے انہیں قوم کے سامنے بے نقاب کیا ہے، ہم نے قوم کی خاطر جیلیں دیکھیں ہیں، مزید قربانی دینا پڑی تو دیں گے لیکن عمران نیازی سن لے اب تمہارا یوم حساب شروع ہوگا۔ بنی گالا میں بیٹھ کر تجاوزات کے نام پر مزدور،بیوہ اور یتیم کا گھر گرا دیتے ہو، لیکن بنی گالا کو 12لاکھ دیکر محفوظ کر لیتے ہو، یہ دوہرا معیار ہے،ہمیں کہتا تھا چار حلقے کھولو وہ کھل گئے اس میں سپریم کورٹ کا بھی فیصلہ آیا،اہل نوشہرہ نے تو واضح انداز میں اسے مسترد کر دیا، ڈسکہ سے ہماری امیدوار نوشین افتخار جیت رہی تھی لیکن راتو ں رات الیکشن کمیشن کا عملہ اغو اء کر لیا گیا،الیکشن کمیشن آئی جی اورچیف سیکرٹری کو ڈھو نڈ تا رہا،الیکشن کمیشن کا عملہ صبح لوٹا تو موقف اپنایا گیا دھند تھی۔

ملک میں ہر طرف مایوسی،غربت،بیروزگار ی کے ڈیرے ہیں۔ جب نواز شریف کو نکالا گیا تو اس وقت ملک کی ترقی کی شرح 5.8فصد تھی اور 72سالوں میں پہلی بار اس سطح پر پہنچی،آج عمران نیازی کے دور میں ترقی کی شرح صفر ہو گئی ہے، حکمرانوں نے ہر حربہ آزمایا لیکن نواز شریف کی قیادت میں مسلم لیگ (ن) سسہ پلائی ہوئی دیوار کی طرح متحدہے اور متحد رہے گی اور اب دوبارہ اللہ کی مدد سے شیر پورے پاکستان میں دھاڑے گا،دوبارہ سے ترقی کا سفر کا شروع کریں گے۔ کارکن ہمارا سرمایہ،نواز شریف اور شہباز کے شیر ہیں، اس موقع پر انہوں نے نواز شریف، شہباز شریف او رمریم نواز کے حق میں نعرے بھی لگوائے۔

حمزہ شہباز نے شنگھائی پل پر لگائے گئے استقبالیہ کیمپ میں بھی خطاب کیا، اس موقع پر احسن اقبال، خواجہ سعد رفیق، سمیت دیگر بھی موجود تھے۔ حمزہ شہباز نے کہا قرضوں کا بوجھ اتنا زیادہ ہوگیا ہے کہ انہیں اتارنے کیلئے دوبارہ قرضہ لئے جارہے ہیں، عمران نیازی کہتا تھاجب پٹرول مہنگا ہوتا ہے تو جان لو حکمران چور ہیں، آج عوام کو پٹرول اور آٹا مہنگا مل رہا ہے تو کون چور ہے؟۔فارن فنڈنگ کیس میں عمران خان نیازی پیشی پر پیشی اور تار یخ پرتاریخ لیتا ہے،پشاور میٹرو اور مالم جبہ کے کیس کا کچھ نہیں بنا۔احسن اقبال،میری بہن مریم، شہباز شریف، خواجہ سعد، نواز شریف، سلمان رفیق، حافظ نعمان پر ایک پائی کی کرپشن ثابت نہیں ہوئی۔

ریاست مدینہ کے علمبردار نے نیا پاکستان تو دور کی بات پرانے پاکستان کو بھی برائیوں کے نیچے دفن کر دیا ہے،اب عوام کو ہمت دکھانی ہے، جن کا دامن صاف ہو وہ عدالتوں میں پیش،جیلوں میں جاتے اورانتقام کا سامنا کرتے ہیں لیکن جن کا دامن صاف نہ ہو وہ فارن فنڈنگ کیس کو داخل دفتر کراکے رکھتے ہیں،لیکن جب فارن فنڈنگ کیس کھلے گا تو لوگ اپنی انگلیاں دانتوں کے نیچے دبا لیں گے ان جیسا تاریخ میں کوئی چور حکمران نہیں آیا۔ عمران خان سر ٹیفائیڈ جھوٹا اور فریبی ہے، انشا اللہ خواجہ آصف بھی سر خرو ہوں گے۔ جس معاشرے میں انصاف نہیں ہوتا وہ قومیں ترقی نہیں کرتیں۔ ہم عوام کے مسائل کی جنگ ملکر لڑیں گے، مسلم لیگ (ن) عوام کے دکھوں کا مداوا کریگی۔

مزید :

سیاست





Source link

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

 اب ہر پراپرٹی ڈیلر کو ایف بی آر کے ساتھ رجسٹرڈ ہونا پڑے گا

 اب ہر پراپرٹی ڈیلر کو ایف بی آر کے ساتھ رجسٹرڈ ہونا پڑے گا

پی آئی اے نے خصوصی کرائے متعارف کرادیئے

پی آئی اے نے خصوصی کرائے متعارف کرادیئے