in

عوام کی بےاحتیاطی جاری رہی تومکمل لاک ڈاؤن لگاناپڑیگا،یاسمین راشد

عوام کی بےاحتیاطی جاری رہی تومکمل لاک ڈاؤن لگاناپڑیگا،یاسمین راشد

پنجاب کی وزیرصحت ڈاکٹر یاسمین راشد کا کہنا ہے کہ بازاروں میں عوام کے ہجوم اور شہریوں کی جانب سے کرونا کی ایس او پیز کو بے دردی سے نظر انداز کیے جانے پر افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ اگر مریضوں کی تعداد میں اضافہ اسی طرح جاری رہا تو حکومت کو مجبوراً  مکمل لاک ڈاؤن لگانا پڑجائےگا۔

سماء کے پروگرام آواز میں گفتگو کرتے ہوئے ڈاکٹر یاسمین راشد کا کہنا تھا کہ اتنی بڑی وباء کے باجود لوگ کرونا ایس او پی پر عمل نہیں کررہے اور بازاروں میں جاکر اپنے گھروں میں کرونا لا رہے ہیں۔

ڈاکٹر یاسمین راشد کا کہنا تھا کہ کرونا سے متعلق کوئی بھی پیشگوئی مشکل ہے کیوں کہ ہم نے گزشتہ برس جو اعداد وشمار دہء تھے صورتحال اس کے برعکس رہی تھی۔

انہوں نے کہا کہ کل کے مقابلے میں آج کیسزمیں کمی ہوئی ہے، پنجاب میں کل 3 ہزار کیسز کی  تصدیق ہوئی تھی جبکہ آج 2 ہزار 190 افراد میں اس وائرس کی تشخیص ہوئی ہے۔

بھارت میں کرونا صورتحال سے متعلق ان کا کہنا تھا کہ اللہ نہ کرے یہاں وہ حالات پیش آئیں لیکن  اگر ہم نے اختیاط نہ کی تو صورتحال خراب ہوسکتی ہے۔

وزیرصحت پنجاب کا کہنا تھا کہ ہمارے پاس اسپتالوں میں کرونا مریضوں کا داخلہ بڑھ گیا ہے جبکہ لاہور میں 87 فیصد وینٹی لیٹرز زیر استعمال آچکے ہیں اور ایمرجنسی یونٹس بھی 72 فیصد بھر چکے ہیں۔

یاسیمن راشد نے کہا کہ جن لوگوں نے گھروں میں آکسیجن لگائی ہوئی ہے ان سے اپیل ہے کہ اسپتال جائیں کیوں کہ اگر انہیں سانس کلا مسئلہ ہے تو پھر ان کا بہتر علاج وہیں ہوسکتا ہے۔

وزیرصحت پنجاب کا کہنا تھا کہ اگر نئے کیسز کے ساتھ صحت یاب مریضوں کا تناسب برابر ہوجائے تو پھر صورتحال کو قابو میں آ سکتی ہے۔

ملک بھر میں آکسیجن سپلائی اور ڈیمانڈ سے متعلق یاسمین راشد کا کہنا تھا کہ ہم نے آکسیجن کی گنجائش بڑھادی ہے جبکہ بڑے اسپتالوں میں آکسیجن ٹینک بھی لگائے گئے ہے۔



Source link

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

ترکی نے ملک بھر میں مکمل لاک ڈاؤن کا اعلان کردیا

ترکی نے ملک بھر میں مکمل لاک ڈاؤن کا اعلان کردیا

فلک شبیر اور سارہ خان کی ملاقات کیسے ہوئی تھی؟

فلک شبیر اور سارہ خان کی ملاقات کیسے ہوئی تھی؟