in

تحریک لبیک پاکستان سے کیا گیا عہد پورا ہوگیا، اعجاز چوہدری

تحریک لبیک پاکستان سے کیا گیا عہد پورا ہوگیا، اعجاز چوہدری

تحریک انصاف کے رہنما سینیٹر اعجازچوہدری کا کہنا ہے کہ حکومت نے جو معاہدہ ٹی ایل پی کے ساتھ کیا تھا وہ پورا ہوگیا ہے۔
سماء کے پروگرام سوال میں گفتگو کرتے ہوئے اعجازچوہدری کا کہنا تھا کہ معاہدے میں صرف یہ لکھا گیا تھا کہ معاملہ پارلیمنٹ کے سامنے رکھیں گے اور وہ وعدہ حکومت نے پورا کردیا۔
اعجاز چوہدری نے کہا کہ معاہدے میں واضح طور پر لکھا ہے کہ معاملے کو پارلیمنٹ کے سامنے رکھیں گے جبکہ فرانسیسی سفیر کو ملک بدرکرنے یا نہ کرنے کا اختیار پارلیمنٹ کو سونپا گیا ہے۔
تحریک انصاف کے رہنما نے مزید کہا کہ معاہدے پر عمل درآمد سے متعلق ٹی ایل پی کی جانب سے کوئی بیان بھی سامنے نہیں آیا جس سے ظاہر ہے کہ وہ ان اقدامات سے مطئمن ہیں۔
جمعے کو ہونے والے قومی اسمبلی کے اجلاس سے متعلق ان کا کہنا تھا کہ آج اجلاس میں جو ہوا وہ افسوسناک تھا اور اپوزیشن کی ہلڑبازی کی وجہ سے اجلاس منسوخ کرنا پڑا کیوں کہ اپوزیشن اراکین یہ طے کرکے آئے تھے کہ اجلاس چلنے نہیں دیں گے۔
اعجازچوہدری کا کہنا تھا کہ اگر ن لیگ کو پیش کی گئی قرارداد پر اعتراض ہے تو اپنی قرارداد اسمبلی سیکرٹریٹ میں جمع کرادے اسے بھی ایجنڈے کا حصہ بنایا جائے گا۔
انہوں نے ٹی ایل پی کے ساتھ کئے گئے پچھلے معاہدے کی پہلی شق پڑھ کرسنائی جس کے تحت 2 سے 3 ماہ میں فرانس کے سفیر کو پارلیمنٹ میں فیصلہ سازی کے ذریعے ملک بدر کرنا تھا۔ اس حوالے سے ان کا کہنا تھا کہ اس شق سے مراد یہ ہے کہ فیصلہ سازی کا اختیار پارلیمنٹ کو دیاگیا ہے۔
پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے رہنما مسلم لیگ ن طارق فضل چوہدری کا کہنا تھا کہ یہ انتہائی حساس معاملہ ہے اس مسئلے پر یک زبان ہوکر آواز اٹھانے کی ضرورت ہے۔
رہنما ن لیگ کا کہنا تھا کہ تحریک لبیک کے ساتھ دو معاہدے ہوئے اگر مذاکرات سے مسئلہ حل ہوتا ہے تو یہ اچھی بات ہے تاہم ملک میں حالیہ پرتشدد واقعات افسوسناک ہیں۔
طارق فضل چوہدری کا کہنا تھا کہ قومی اسمبلی میں قرارداد پیش کرنے والے تحریک انصاف کے ایم این اے امجد خان کا کہنا ہے کہ یہ ان کی ذاتی قرارداد تھی جسے حکومت نے سپورٹ کیا۔ انہوں نے کہا اس بات سے حکومت کی سنجیدگی کا اندازہ لگایا جاسکتا ہے۔
ان کا کہنا تھا کہ جو معاہدہ تحریک لبیک کے ساتھ ہوا ہے اسے حکومت پارلیمنٹ کے سامنے رکھے۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ معادہ حکومت نے کیا اور عملدرآمد بھی حکومت کی ہی ذمہ داری ہے۔



Source link

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

اسپیکر قومی اسمبلی کارویہ غیر جانبدارانہ نہیں،نازبلوچ

اسپیکر قومی اسمبلی کارویہ غیر جانبدارانہ نہیں،نازبلوچ

کینیڈاسےپروازیں معطل ہونے پرپاکستان کانظرثانی کامطالبہ

کینیڈاسےپروازیں معطل ہونے پرپاکستان کانظرثانی کامطالبہ