in

کوئٹہ حملہ سیکیورٹی کی ناکامی نہیں، لیاقت شاہوانی

کوئٹہ حملہ سیکیورٹی کی ناکامی نہیں، لیاقت شاہوانی

بلوچستان حکومت کے ترجمان لیاقت شاہوانی کا کہنا ہے کہ کوئٹہ میں دہشتگردی کا واقعہ سیکیورٹی کی ناکامی نہیں بلکہ دہشت گردوں کی ایک جامع منصوبہ بندی کا نتیجہ ہے۔

سماء کے پروگرام آواز میں گفتگو کرتے ہوئے لیاقت شاہوانی کا کہنا تھا کہ سی ٹی ڈی اور خفیہ ایجنسیاں واقعے کی تحقیقات کررہی ہیں اور حتمی رپورٹ میں تمام سوالوں کے جوابات دے دیئے جائیں گے۔

ترجمان بلوچستان حکومت کا کہنا تھا کہ جس تنظیم نے ذمہ داری قبول کی ہے وہ ملک بھر میں اس قسم کے واقعات میں ملوث ہے۔

لیاقت شاہوانی نے کہا کہ ہمارے ٹھوس اقدامات کے باعث بلوچستان میں دہشت گردی کے واقعات میں 53 فیصد کمی واقع ہوئی ہے۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ بلوچستان کی سرحدیں ایران اور افغانستان سے ملتی ہیں تاہم جون جولائی میں باڑ لگانے کا عمل مکمل ہوجائے گا جس سے صورتحال مزید بہتر ہوجائے گی۔

کوئٹہ دہشت گردی واقعے سے متعلق لیاقت شاہوانی کا کہنا تھا کہ سیکیورٹی کے سخت اقدامات کی بدولت دہشت گرد کو ہوٹل کے اندر جانے کا موقع نہیں ملا اور اس کو باہر ہی دھماکا کرنا پڑا۔

سیف سیٹی پروجیکٹ سے متعلق ان کا کہنا تھا کہ منصوبے پر کام کا آغاز ہوچکا ہے جس کے تحت شہر بھر میں 1400 سی سی ٹی وی کیمر ے نصب کیے جائیں گے۔

 لیاقت شاہوانی کا مزید کہنا تھا کہ ہم نے مذمت کم اور مزاحمت زیادہ کی ہے تاہم انہوں نے اس بات کو تسلیم کیا کہ اگر شہر میں کیمرے لگے ہوتے تو واقعے کی تحقیقات میں آسانی ہوجاتی۔



Source link

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

شانگلہ: کئی ديہاتوں کا واحد رابطہ پل خستہ حالی کاشکار

شانگلہ: کئی ديہاتوں کا واحد رابطہ پل خستہ حالی کاشکار

پاکستان میں کرونا کے مثبت کیسز کی شرح 10.90 فیصد ہوگئی

پاکستان میں کرونا کے مثبت کیسز کی شرح 10.90 فیصد ہوگئی