in

چینی کمپنی کینسینو کی پاکستان کو کرونا ویکسین کی پیشکش

چینی کمپنی کینسینو کی پاکستان کو کرونا ویکسین کی پیشکش

کینسینو باؤلوجکس نے پاکستان کو 2کروڑ کرونا وائرس کی ڈوز دینے کی پیشکش کردی۔

کینسوینو بائولوجکس کے مقامی پارٹنر اے جے ایم فارما پرائیوٹ کے مشیر حسن عباس ظہیر نے بتایا کہ کرونا ویکسین تیار کرنے والی چینی کمپنی پاکستان کو ترجیحی بنیادوں اور کم قیمت میں کوویڈ-19 ویکسین فراہم کرے گی، جس نے منظوری حاصل کرنے کیلیے پہلے ہی پاکستان کے ڈرگ ریگولیٹری اتھارٹی آف پاکستان (ڈریپ) کو درخواست جمع کرادی گئی ہے۔

حسن عباس ظہیر نے مزید کہا کہ ’ہمیں اس بات کو ذہن میں رکھنے کی ضرورت ہے کہ اس ویکسین کی طلب بہت زیادہ ہے اور آپ جانتے ہیں کہ دوسرے ممالک نے کئی مہینے پہلے ہی ایڈوانس بکنگ شروع کردی تھی، ہمیں بھی ایسا ہی کرنے کی ضرورت ہے جبکہ ہمیں پہلے ہی دیر ہوگئی ہے‘۔

کمپنی کا کہنا ہے کہ مقامی طور پر شیشیوں کو بھرنے اور ویکسین کی خریداری کی لاگت میں 25فیصد کمی آئے گی۔

دوسری جانب امیر اور غریب ممالک کے مابین ویکسین کے بڑھتے ہوئے اختلاف پر تشویش پائی جارہی ہے جسے عالمی ادارہ صحت کے ڈائریکٹر جنرل نے “تباہ کن اخلاقی ناکامی” قرار دیا ہے۔

بلومبرگ کی رپورٹ کے مطابق پاکستان ان 51ممالک میں شامل نہیں ہے جنہوں نے عالمی سطح پر پانچواں سب سے زیادہ آبادی والا ملک ہونے کے باوجود شاٹس کا انتظام شروع کیا ہے۔

چین سے دوستی اور سی پیک کے باعث سینوفرم ویکسین کو پہلے پاکستان میں استعمال کی منظوری مل گئی ہے۔ جسے چین نیشنل بائیوٹیک گروپ کمپنی نے تیار کیا ہے۔

سینوفرم ویکسین رواں ماہ جنوری کے آخر میں 3کروڑ سے زائد ڈوز پاکستان بھیجے گا جس کے بعد پاکستان میں کرونا ویکسینیشن کا آغاز ہوگا۔

پاکستان میں مقامی کمپنی کے تیسرے مرحلے کے ٹرائلز کے نتائج ممکنہ طور پر کرونا کے خلاف کینسوینو ویکسین کے تحفظ کی سطح کا ابتدائی اشارہ ہوں گے۔



Source link

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

پاکستان میں آج پھر ڈالر مہنگا ہوگیا

پاکستان میں آج پھر ڈالر مہنگا ہوگیا

سٹیٹ بینک نے مانیٹری پالیسی کا اعلان کردیا مہنگائی میں اضافے کی بھی پیشگوئی

سٹیٹ بینک نے مانیٹری پالیسی کا اعلان کردیا مہنگائی میں اضافے کی بھی پیشگوئی