in

امر جلیل کی 4 سال پرانی ویڈیو پر دائیں بازو کا سخت ردعمل

امر جلیل کی 4 سال پرانی ویڈیو پر دائیں بازو کا سخت ردعمل

سندھی مصنف امر جلیل کے 4 سالہ پرانے مکالمے کی 2 منٹ اور 18 سیکنڈ کی ویڈیو پر دائیں بازو کی جماعتوں کی جانب سے شدید ردعمل سامنے آیا اور ایک رہنما نے اُن کے سر کی قیمت لاکھوں روپے مقرر کردی ہے۔ اس ویڈیو میں امر جلیل اپنی ایک مختصر کہانی پڑھ رہے ہیں جو کہ پاکستان میں آزادی اظہار نہ ہونے سے متعلق ہے۔ یہ ویڈیو سندھ لٹریچر فیسٹول کی ہے۔

اردو سب ٹائٹل کےساتھ سندھی زبان میں ان کے مکالمے کا یہ حصہ دوسرے سندھ لٹریچر فیسٹول کے مرکزی سیشن میں اکتوبر2017 میں پڑھا گیا۔ اس حصے کو 30 مارچ 2021 کو ٹویٹر پر پوسٹ کیا گیا۔

سیشن کی موڈیریٹر نے امرجلیل سے پوچھا کہ وہ کس موضوع پر اطمینان کے ساتھ بات کرسکتے ہیں۔انھوں نے جواب دیا کہ یہ غلط تھا کہ آزادی رائے پر کوئی بندش نہیں تھی اور وہ جو چاہتے وہ کہہ سکتے تھے۔

امرجلیل نے سوال کیا کہ آزادی اظہار کہاں ہے؟ شرکا میں بہت سے لوگ موجود ہیں جنھوں نے نوٹ بکس تھامی ہوئی ہیں اور وہ ان کے الفاظ لکھ رہے ہیں اور بعد میں ان میں اضافہ کرکے معانی تبدیل کردیں گے۔

انھوں نے برٹرینڈ رسل کی تحریر’ میں کرسچن کیوں نہیں ہوں‘ کا تذکرہ کیا اورشرکا سے کہا کہ اگرانھوں نے اس تحریرکونہیں پڑھا تووہ اس کوضرورپڑھیں۔ انھوں نےپوچھا کہ کیا پاکستان میں کسی کےلیے ایسا کچھ لکھنا ممکن تھا؟ انھوں نے ضیاء دور میں سامنے آنےوالی ایسی قوتوں کا حوالہ دیا جن کی وجہ سے ایسے موضوعات پر بات کرنا ممکن نہیں۔ان کے مطابق منافقت پروان چڑھی ہے۔

خشونت سنگھ کی کتاب’ اینڈ آف انڈیا‘ کا حوالہ دیتے ہوئے امر جلیل نے کہا کہ انہوں نے سوچا تھا کہ وہ بھی  اس جیسی کتاب لکھیں، خصوصی طورپر بنگلادیش کی علیحدگی کے تناظر میں۔

ان کے کچھ دوستوں کا کہنا تھا کہ وہ پریشان نہ ہوں اور وہ انھیں کوئی غیرملکی پبلشرڈھونڈ دیں گے۔انھوں نے جواب دیا کہ یہ اچھی بات ہے لیکن میں غیرملک میں سیاسی پناہ حاصل کرنے کےلیے بہت بوڑھا ہوچکا ہوں۔

ان کا کہنا تھا کہ سوالات ہوتے ہوئے بھی اگر وہ نہیں پوچھتے اورخاموش بیٹھتے ہیں تو یہ منافت ہوگی۔امر جلیل نے کہا کہ ان کی عمر  80 برس سے زائد ہے اوروہ پاکستان میں جمہوریت کی صورتحال کوجانتے ہیں اور یہ بھی کہ ان کو کتنی آزادی اظہار حاصل ہے۔



Source link

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

گووندا کی صحت بارے پریشان کن خبر آگئی

گووندا کی صحت بارے پریشان کن خبر آگئی

 حکومت کا چینی درآمدکرنے کے لئے تیسری بار ٹینڈر جاری کرنیکا فیصلہ

 حکومت کا چینی درآمدکرنے کے لئے تیسری بار ٹینڈر جاری کرنیکا فیصلہ