in

لاہور چڑیا گھر میں سفید ٹائیگر کا بچہ دم توڑ گیا

لاہور چڑیا گھر میں سفید ٹائیگر کا بچہ دم توڑ گیا

لاہور چڑیا گھر میں 4 روز قبل پیدا ہونیوالے سفید ٹائیگر کا انتقال کرگیا۔ سفید ٹائیگر کے بچے کے مرنے کی وجوہات کا تاحال علم نہیں ہوسکا۔

ڈپٹی ڈائریکٹر لاہور چڑیا گھر کا کہنا ہے کہ سفید ٹائیگر کا بچہ بہت کمزور تھا، بچے پر اس کی ماں کے حملے کے بعد سے اسے فیڈر کے ذریعے دودھ پلایا جارہا تھا۔

لاہور چڑیا گھر میں اب 5 سفید ٹائیگر باقی رہ گئے۔

اس سے قبل 4 فروری کو لاہور زو میں سفید ٹائیگر کے 2 بچے مر گئے تھے۔

ڈپٹی ڈائریکٹر لاہور زو کا کہنا تھا کہ دونوں بچے گزشتہ 12 روز سے ڈائیریا میں مبتلا تھے، دونوں بچے پیٹ کی خرابی کے باعث شدید اسہال اور خون کی الٹیاں کررہے تھے، انہیں مختلف ادویات دی گئیں تاہم وہ جانبر نہ ہوسکے۔

نام ظاہر نہ کرنے کی شرط پر لاہور زو کے ایک منتظم کا کہنا تھا کہ ان دونوں بچوں نے مرنے سے 2 روز قبل کھانا پینا چھوڑ دیا تھا۔

انہوں نے بتایا کہ ان بچوں کو غیر معیاری دودھ اور گوشتھ دیا گیا تھا، اس کے باوجود کہ ابتدائی مہینوں میں ٹائیگر کے بچوں کو زیادہ مقدار میں گوشت نہیں دیا جاتا۔

بعد ازاں یہ کہا گیا تھا کہ سفید ٹائیگر کے دونوں بچوں کا انتقال کرونا وائرس کے باعث ہوا تھا۔



Source link

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

سونے کی قیمت میں مسلسل کمی کے بعد اضافہ

سونے کی قیمت میں مسلسل کمی کے بعد اضافہ

ٹراؤزر واپس نہ کرنے  پر جھگڑا فائرنگ سے گاہک سمیت 3 افراد جان کی بازی ہارگئے

ٹراؤزر واپس نہ کرنے  پر جھگڑا فائرنگ سے گاہک سمیت 3 افراد جان کی بازی ہارگئے