in

حکومتی حمایت یافتہ صادق سنجرانی چیئرمین سینیٹ منتخب

حکومتی حمایت یافتہ صادق سنجرانی چیئرمین سینیٹ منتخب

حکومت امیدوار صادق سنجرانی چیئرمین سینیٹ منتخب ہوگئے، پاکستان ڈیموکریٹک موومنٹ کے مشترکہ امیدوار یوسف رضا گیلانی کو شکست ہوگئی۔

صادق سنجرانی نے سینیٹ میں مسلسل تیسری مرتبہ ووٹنگ میں کامیابی حاصل کی، وہ دوسری مرتبہ چیئرمین سینییٹ منتخب ہوئے جبکہ ایک بار عدم اعتماد کی تحریک میں بھی کامیابی حاصل کی تھی۔

چیئرمین سینیٹ کیلئے پولنگ کے نتائج کے مطابق یوسف رضا گیلانی کو ملنے والے 7 ووٹ مسترد ہوگئے، سینیٹرز نے پی ڈی ایم امیدوار کے نام پر مہر لگائی جس کے باعث ووٹ مسترد کئے گئے، ایک امیدوار نے دونوں اراکین کو ووٹ دیا، جس کے بعد مجموعی طور پر مسترد ووٹوں کی تعداد 8 ہوگئی۔

پریزائیڈنگ افسر مظفر حسین شاہ کی جانب سے اعلان کردہ نتائج کے مطابق نومنتخب چیئرمین سینیٹ صادق سنجرانی کو 48 اور پاکستان ڈیموکریٹک موومنٹ کے امیدوار یوسف رضا گیلانی کو 42 ووٹ ملے۔

پیپلزپارٹی کے سینیٹر فاروق ایچ نائیک نے  7 ووٹ مسترد کئے جانے کو چیلنج کردیا۔ ان کا کہنا ہے کہ ہمارے سینیٹرز نے طے شدہ طریقے کے مطابق ووٹ ڈالا، اراکین نے خانے کے اندر مہر لگائی، مہر اگر خانے کے باہر ہے تو آپ ووٹ مسترد کرسکتے ہیں۔

سینیٹ کے چیئرمین اور ڈپٹی چیئرمین کے انتخاب کیلئے پریزائیڈنگ آفیسر مظفر حسین شاہ کی صدارت میں سینیٹ کا اجلاس ہوا۔ جس میں 98 اراکین نے اپنا ووٹ کاسٹ کیا، جماعت اسلامی کے سینیٹر مشتاق احمد غیر حاضری رہے جبکہ مسلم لیگ ن کے سینیٹر اسحاق ڈار بیرون ملک موجود ہیں۔

نومنتخب چیئرمین سینیٹ صادق سنجرانی سے حلف اٹھالیا، پریزائیڈنگ افسر مظفر حسین شاہ نے ان سے حلف لیا، جس کے بعد صادق سنجرانی نے سینیٹ اجلاس کی صدارت سنبھال لی۔

ڈپٹی چیئرمین کے انتخاب کیلئے پولنگ جاری ہے، عبدالغفور حیدری نے پہلا ووٹ کاسٹ کیا۔

چیئرمین سینیٹ صادق سنجرانی کا کہنا ہے کہ نامے کے سامنے مہر درست تسلیم ہوگی۔



Source link

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

پاکستان ریلوے کا نئی ٹرین سروس کا آغاز

پاکستان ریلوے کا نئی ٹرین سروس کا آغاز

دورہ جنوبی افریقہ و زمبابوے کیلیے قومی اسکواڈز کااعلان

دورہ جنوبی افریقہ و زمبابوے کیلیے قومی اسکواڈز کااعلان