in

گلیات میں تیندووں کی بہتات، انسانوں سے ٹکراؤ بڑھ گیا

گلیات میں تیندووں کی بہتات، انسانوں سے ٹکراؤ بڑھ گیا

آٹھ سالہ اظہر اپنے چچا رستم کے ساتھ نزدیکی گاؤں سے دو بیل ہانک کر لا رہا تھا۔ ایک گھنٹے کی مسافت کے دوران وہ جنگل عبور کر کے ضلع ایبٹ آباد میں واقع اپنے گاؤں مکول بالا کے بالکل نزدیک پہنچ چکے تھے لیکن دونوں اس بات سے بے خبر تھے کہ اس سنسان جگہ پر کوئی اور بھی تھا جو ان پر نظر رکھے ہوئے تھا۔

جب کچھ دیر کیلئے اظہر کے چہکنے کی آواز نہ آئی تو آگے چلتے رستم نے مڑ کر دیکھا لیکن اسے اس کا بھتیجا بیلوں کے عقب میں کہیں نظر نہیں آیا۔ گھبراہٹ کے مارے اس نے اظہر کو آوازیں دینی شروع کیں اور پہاڑ کے ساتھ چلتے اس تنگ راستے کے بائیں جانب کھائی کی طرف جاتی ہوئی ڈھلوان پر اتر گیا۔ تھوڑی دور تک ہی اترا تو کچھ فاصلے پر اسے ایک تیندوا نظر آیا جو اسے اپنی جانب آتا دیکھ کر تیزی سے جھاڑیوں میں غائب ہوگیا۔ جب رستم اس جگہ پہنچا تو دیکھا کہ اظہر خون میں لت پت بیجان پڑا ہوا ہے۔ تیندوے نے اس کے گلے اور سینے کو بھنبھوڑ ڈالا تھا۔

اظہر کے والد ارشاد خان نے سماء ڈیجیٹل کو بتایا کہ ان کا بیٹا اسی جگہ پر دم توڑ چکا تھا اور لاش کی پوسٹ مارٹم رپورٹ نے اس بات کی تصدیق کی تھی کہ اظہر کے گلے اور سینے پر پائے جانے والے نشانات تیندوے کے دانتوں اور پنجوں کے تھے اور ان ہی کے باعث اس کی موت واقع ہوئی۔

ارشاد خان نے کہا کہ تیندوے ان کے گاؤں میں گھس کر بکریاں اکثر اٹھا لے جاتے ہیں لیکن کسی انسان پر حملہ آور ہونے کا وہ پہلا واقعہ تھا۔

انہوں نے کہا کہ وہ اور ان کے بھائی اس تیندوے کو مارکر اظہر کا بدلہ چکانے کی خاطر 2 ماہ تک جنگل جاتے رہے لیکن وہ انہیں نہیں ملا۔

گزشتہ کچھ دہائیوں سے اس قسم کے اندوہناک واقعات ہر سال دو سال کے وقفے کے بعد رونماء ہوجاتے ہیں۔

ایبٹ آباد کے محکمہ جنگلی حیات کے سب ڈویژنل فاریسٹ افسر سردار محمد نواز نے سماء ڈیجیٹل کو بتایا کہ گلیات میں سن 1984 سے اب تک 12 افراد تیندووں کے ہاتھوں مارے جاچکے ہیں جبکہ اسی عرصے میں خاصی بڑی تعداد میں لوگ زخمی بھی ہوئے ہیں۔

ایسے واقعات کے افسوسناک ہونے میں کوئی کلام نہیں لیکن اس کے ساتھ ہی ایک امید افزاء پہلو یہ ہے کہ گلیات میں تیندووں کی تعداد میں خاطر خواہ اضافہ ہو چکا ہے۔

محکمہ جنگلی حیات کے مطابق یہ جانور جو گلیات میں 20 سال قبل معدوم ہی تھا اب ان علاقوں میں بکثرت پایا جاتا ہے۔



Source link

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

کرونا وائرس:24گھنٹےمیں 2521 مثبت کیسزکی تصدیق

کرونا وائرس:24گھنٹےمیں 2521 مثبت کیسزکی تصدیق

پنجاب میں دھند،موٹروے پرٹریفک کی روانی متاثر

پنجاب میں دھند،موٹروے پرٹریفک کی روانی متاثر