in

مائیں ذہنی توازن کھو بھی دیں بیٹوں کانام نہیں بھولتیں

مائیں ذہنی توازن کھو بھی دیں بیٹوں کانام نہیں بھولتیں

ایدھی پناہ گاہ میں اولاد کو ترستی بوڑھی نگاہیں

عورت کا سب سے حسین روپ ماں کی شکل میں ہوتا ہے جو ایک ایسی ہستی ہے جسے لاکھ ذہنی مریض قرار دے دیا جائے یا وہ واقعی اپنے حواس کھو بیٹھی ہوں لیکن تب بھی عموماً سب کچھ بھول جانے کے باوجود وہ اپنی اولاد خصوصاً بیٹوں کے نام نہیں بھولتیں، حتیٰ کہ ایسے بیٹوں کے بھی جو انہیں اپنی مرضی یا کسی اور کے دباؤ پر غیروں کی پناہ گاہوں میں چھوڑ آتے ہیں اور پھر کبھی مڑ کر بھی نہیں دیکھتے۔

کراچی میں ایسی ہی ايک ایدھی پناہ گاہ بھی ہے جہاں ذہنی امراض میں مبتلا خواتیں بے بسی کی زندگی گزارنے پر مجبور ہیں ان میں سے کسی کو گھر والے چھوڑ گئے تو کوئی حالات سے تنگ آکر بھاگ آئی ليکن اہلخانہ کی یاد ان کے دلوں سے نہیں جاتی۔

وہاں موجود اکثر خواتين کو ذہنی مريض بتايا جاتا ہے اسی وجہ سے انہيں گھروں سے نکال ديا گيا یا پھر ان میں سے کچھ کو گھر والےعلاج کیلئے چھوڑ گئے اور پھر ان کی زندگی اسی چہار ديواری ميں گزرجاتی ہے۔ ایسی بیشتر بے بس خواتین کو کئی برسوں سے کوئی پوچھنے نہیں آیا۔

ان میں سے کچھ ایسی بھی ہوتی ہیں جو گھر ہوتے ہوئے بھی سڑکوں پر پڑی ملتی ہیں اور مسلسل ذہنی اذیت انہیں اس نہج پر بھی لے آتی ہے جہاں انہیں ذہنی طور پر صحتمند تصور نہیں کیا جارہا ہوتا۔



Source link

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

عورت مارچ: کیا خواتین کو حقوق ملنے لگے ہیں؟

عورت مارچ: کیا خواتین کو حقوق ملنے لگے ہیں؟

بالی ووڈ اداکار متھن چکرورتی بی جےپی میں شامل

بالی ووڈ اداکار متھن چکرورتی بی جےپی میں شامل