in

کیا اب 6ماہ تک تحریک عدم اعتماد نہیں لائی جاسکتی؟

کیا اب 6ماہ تک تحریک عدم اعتماد نہیں لائی جاسکتی؟

جانیے آئین کے تناظر میں ماہرانہ رائے

وزیراعظم عمران خان کے اعتماد کے ووٹ لینے کے بعد کچھ حلقوں کی جانب سے یہ سوال اٹھایا جارہا تھا کہ آئین کے تحت اب کتنے عرصے تک وزیراعظم سے اعتماد کا ووٹ لینے کا مطالبہ نہیں کیا جاسکتا؟۔ اس حوالے سے ہفتہ کے روز وزیر داخلہ شیخ رشید نے یہ نکتہ اٹھایا کہ وزیراعظم عمران خان نے چونکہ اعتماد کا ووٹ لے لیا ہے، اس لئے اب آئندہ 6 ماہ تک عدم اعتماد کی کوئی تحریک پیش نہیں کی جاسکتی۔

سماء ٹی وی اسلام آباد کے بیورو چیف اور سینئر صحافی خالد عظیم چوہدری نے اس معاملے پر روشنی ڈالتے ہوئے کہا ہے کہ ماضی میں تحریک عدم اعتماد کے حوالے سے آئین پاکستان میں یہ درج تھا کہ اگر کسی کیخلاف عدم اعتماد کی تحریک ناکام ہوجائے تو دوبارہ 6 ماہ تک اس قسم کی کوئی تحریک پیش نہیں کی جاسکتی لیکن سن 1985ء میں وہ شرط ختم کردی گئی تھی۔ انہوں نے مزید کہا کہ چاہے اعتماد کی تحریک ہو یا عدم اعتماد کی اب اس کیلئے آئین میں 6 ماہ کی مدت والی پابندی موجود نہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ اس حوالے سے شیخ رشید کو مغالطہ ہوا ہے اور غالباً ان کے ذہن میں وہ پرانی شق ہوگی جس کی بناء پر انہوں نے یہ کہا کہ آئندہ 6 ماہ تک ایسی کوئی تحریک پیش نہیں کی جاسکے گی۔



Source link

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

وزیراعظم کےاعتماد کاووٹ تسلیم نہیں کرتے، فضل الرحمان

وزیراعظم کےاعتماد کاووٹ تسلیم نہیں کرتے، فضل الرحمان

بھارت:عائشہ خودکشی کیس میں پیش رفت،دلدوز انکشافات

بھارت:عائشہ خودکشی کیس میں پیش رفت،دلدوز انکشافات