in

ن لیگی رہنما مشاہد اللہ خان انتقال کرگئے

ن لیگی رہنما مشاہد اللہ خان انتقال کرگئے

پاکستان مسلم لیگ ن کے شعلہ بیان اور بے باک تقاریر کرنے والے  رہنما سینیٹر مشاہد اللہ انتقال کرگئے۔ اس کی عمر 68 برس تھی۔

پاکستان مسلم لیگ ن کی نائب صدر مریم نواز شریف نے مائیکرو بلاگنگ سائٹ پر تصدیق کرتے ہوئے کہا کہ سینیٹر مشاہد اللہ انتقال کرگئے ہیں۔ اہل خانہ کے مطابق وہ کئی عرصے سے عليل تھے۔ ان کی نماز جنازہ بعد نماز ظہر اسلام آباد ميں ادا کی جائے گی۔

مريم نواز شریف کی جانب سے مشاہد اللہ خان کے انتقال پر دکھ کا اظہار کیا گیا ہے۔ اپنے بیان میں مریم نواز شریف کا کہنا تھا کہ یہ پارٹی کیلئے بہت بڑا نقصان ہے۔ ان کی وفات سے پيدا ہونے والا خلا کبھی پُر نہيں ہو سکتا۔ انہوں نے ہمیشہ والد جيسی شفقت اور محبت دی۔

سابق گورنر سندھ محمد زبیر کا کہنا ہے کہ سینیٹر مشاہداللہ خان ایک نڈر انسان تھے، وہ آمریت کے خلاف ڈٹ کر کھڑے رہے۔

حکمراں جماعت تحريک انصاف کے فيصل جاويد نے مشاہد اللہ کی وفات کو ن ليگ کیلئے بڑا نقصان قرار ديا۔ وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کی جانب سے بھی مشاہد اللہ خان کے انتقال پر تعزیت کا اظہار کیا گیا۔ چيئرمين سينيٹ کا کہنا ہے کہ ملکی سياست ميں مشاہد اللہ کی خدمات کو ہميشہ ياد رکھا جائے گا۔

مشاہد اللہ شاعرانہ انداز میں مخالفین پر طنز کے نشتر چلانے میں مہارت رکھتے تھے۔ شاعرانہ انداز، شعلہ بيانی، بے باک اور نڈر انداز مشاہد اللہ کی تقاریر اور خطاب کا خاصہ تھے۔ سينيٹ کے اندر ہوں يا باہر مشاہد اللہ خان اپنے منفرد انداز سے سياسی مخالفين کو جواب ديتے رہے۔ مشاہد اللہ خان 2009 اور 2015 ميں سينيٹر منتخب ہوئے۔

سال 2021 ميں تيسری بار بھی انہیں پارٹی ٹکٹ جاری ہوا تھا۔ وہ ن لیگ کے دور میں وزير اطلاعات، وزير ماحوليات بھی رہے۔

مشاہد اللہ خان 1953 میں راولپنڈی میں پیدا ہوئے۔ انہوں نے 1990 میں مسلم لیگ ن میں شمولیت اختیار کی۔ سال 2009 اور 2015 میں وہ 2 مرتبہ مسلم لیگ ن کے ٹکٹ پر سینیٹر منتخب ہوئے۔ 2017 میں شاہد خاقان عباسی کی کابینہ میں دوبارہ وزیر بنے۔



Source link

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

انگلش ٹیم بھارتی اسپنرز کے شکنجے سے نہ بچ سکی

انگلش ٹیم بھارتی اسپنرز کے شکنجے سے نہ بچ سکی

MA Dadu Child Rape

دادو: 3سالہ بچی کیساتھ ریپ کے الزام پر ملزم گرفتار