in

کراچی کے 3اسپتال ایم ٹی آئی ایکٹ کےتحت لاناچاہتے ہیں،ڈاکٹرفیصل

کراچی کے 3اسپتال ایم ٹی آئی ایکٹ کےتحت لاناچاہتے ہیں،ڈاکٹرفیصل

معاون خصوصی صحت ڈاکٹر فیصل سلطان کا کہنا ہے کہ کل سینیٹ سے ایم ٹی آئی ایکٹ پاس ہوگیا اور اب ہم شیخ زید اسپتال لاہور،پمز اسپتال اسلام آباد سمیت کراچی کے 3 بڑے اسپتالوں کو اس فریم ورک میں لانا چاہتے ہیں۔

ڈاکٹرفیصل سلطان کا کہنا تھا کہ پاکستان میں 75 فیصد ہیلتھ کیئر ڈیلیوری نجی اسپتالوں کے ذریعے ہوتی ہے اور یہ ہر اس ملک میں ہورہا ہے جہاں سرکاری اسپتال ٹھیک طرح کام نہیں کررہا ۔

انہوں نے کہا ہیلتھ کارڈ کے اجراء کا مقصد بھی یہی ہے کہ جہاں عوام کو سرکاری اسپتالوں میں مطلوبہ سہولیات میسر نہ ہو وہ اپنا علاج نجی اسپتالوں سے کراو سکیں۔

فیصل سلطان کا کہنا تھا کہ سرکاری اسپتالوں کی حالت زار کی دو وجوہات ہیں ایک بیڈگورننس اور دوسرا فنڈ کی کمی ہے۔

انہوں نے کہا کہ بڑے اسپتالوں کو ایک سیکرٹری اسپتال سے دور کسی آفس میں دیکھ رہا ہوتا ہے اور اس کے علاوہ بھی ان کو کام ہوتے ہیں تو یہ کام اس طرح ممکن نہیں ہے۔

معاون خصوصی کا کہنا تھا کہ ان مسائل کو حتم کرنے کےلئے ایم ٹی آئی ایکٹ لایا گیا ہے تاکہ اسپتالوں کے اندر ایسی ایک نظام ہوں جو خود سے ان چیزوں کو منیج کرے۔

انہوں نے کہا کہ آپ کے پاس دو ماڈل ہیں یا تو ڈاکٹرز کو اجازت دے کہ وہ اپنی پریکٹس بھی اسی اسپتال کے اندر کرے تاکہ اس کی پوری توجہ اسی ادارے پر رہے یا ڈاکٹرز کو اچھی سیلری دے تاکہ ان کو دوسری جگہ پریکٹس کی ضرورت نہ پڑے۔

فیصل سلطان کا کہنا تھا کہ بجٹ میں جو ڈویلپمنٹ پروگرام میں اضافہ کیا گیا ہے اس کا زیادہ تر حصہ تعلیم اور صحت کے شعبوں پر خرچ  ہوگا۔

انہوں نے کہا ملک میں نیوٹریشن پروگرام شروع کررہے ہیں جس پر 5 سال میں 2 ارب روپے خرچ کئے جائیں گے۔



Source link

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

کترینہ کیف کیلئے سلمان خان کا محبت بھرا پیغام

کترینہ کیف کیلئے سلمان خان کا محبت بھرا پیغام

سندھ: شواہدکے بغیر گرفتاری پرپابندی، نئے پوليس رولز کی منظوری

سندھ: شواہدکے بغیر گرفتاری پرپابندی، نئے پوليس رولز کی منظوری