in

لاہور:چڑیا گھر میں شیر کا بچہ ابدی نیند سو گیا

لاہور:چڑیا گھر میں شیر کا بچہ ابدی نیند سو گیا

لاہور کے چڑیا گھر میں ڈیڑھ ماہ کا شیر کا بچہ ابدی نیند سو گیا۔

چڑيا گھر ميں ڈيڑھ ماہ قبل شیرنی کے ہاں 4 بچوں کی پیدائش ہوئی تھ، تاہم ایک بچہ پیدائش کے وقت ہی انتقال کرگیا تھا، جب کہ 3 بچوں کو مصنوعی طریقے سے فیڈ کروایا جا رہا تھا۔

لاہور چڑیا گھر انتظامیہ کے مطابق شیر کے تینوں بچے کمزور اور انتہائی نگہداشت کے وارڈ میں تھے، تاہم ایک اور بچہ آج بروز منگل 13 جولائی کو کمزوری کی وجہ سے زندگی کی بازی ہار گیا۔

قوتِ مدافعت کم ہونے کے باعث بچوں کی صحت متاثرہو رہی تھی۔ ویٹرنری ڈاکٹرز کی زیر نگرانی شیر کے بچوں کی نگہداشت جاری تھی۔

واضح رہے کہ اس سے قبل رواں سال کے آغاز میں 2 سفید شیر کے بچے کرونا وائرس کے باعث انتقال کرگئے تھے۔ دونوں بچوں کی عمریں 11 ہفتے کی تھیں۔ سفید شیر کے بچوں کی موت 30 جنوری کو ہوئی تھی، جب کہ اپنی موت سے چار روز قبل سے زیر علاج تھے۔

ماہرین کا خیال تھا کہ انہیں پر فلین پینیلوکوپینیا وائرس کا حملہ ہوا ہے جو پاکستان میں عام ہے اور جانور کے مدافعتی نظام کو نشانہ بناتا ہے۔ پوسٹ مارٹم سے پتہ چلا کہ مرنے والے بچوں کے پھیپھڑوں کو بری طرح نقصان پہنچا تھا اور وہ شدید انفیکشن میں مبتلا تھے۔

اس کے بارے میں پیتھالوجسٹ نے یہ نتیجہ اخذ کیا کہ سفید شیر کے بچوں کی موت کووڈ 19 سے ہوئی ہے۔

اگرچہ کورونا وائرس کے لیے پی سی آر کا کوئی ٹیسٹ نہیں لیا گیا تاہم چڑیا گھر کی ڈپٹی ڈائریکٹر کرن سلیم نے بتایا کہ چڑیا گھر کورونا وائرس کا شکار تھا جس سے پاکستان میں اب تک 12 ہزار 276 افراد انتقال کرچکے ہیں۔

انہوں نے بتایا کہ ‘سفید شیر کے بچوں کی موت کے بعد چڑیا گھر انتظامیہ نے تمام عہدیداروں کے ٹیسٹ کروایا ہے اور عملے کے 6 افراد کا ٹیسٹ مثبت آیا ہے۔ کرن سلیم نے بتایا کہ ‘کورونا کا شکار عملے میں ایک شخص وہ بھی شامل تھا جس نے ان بچوں کی دیکھ بحال کی تھی۔

سفید شیر کے 2 بچوں کی ہلاکت پر جانوروں کے حقوق کی تنظیم جسٹس برائے کیکی (جے ایف کے) کی بانی کا کہنا تھا کہ آخری سفید شیر کے 2 بچوں کی لاہور کے چڑیا گھر میں موت ایک مرتبہ پھر انتظامیہ اور حکام کی غفلت ظاہر کرگئی۔



Source link

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

بھارتی گلوکار پاکستانی ڈرامے کی تعریف کرنے پر مجبور

بھارتی گلوکار پاکستانی ڈرامے کی تعریف کرنے پر مجبور

پشاور کے 3 علاقوں میں اسمارٹ لاک ڈاؤن

پشاور کے 3 علاقوں میں اسمارٹ لاک ڈاؤن