in

بلاول بھٹو کو آئینہ دکھانا پڑے گا، عطاء تارڑ

بلاول بھٹو کو آئینہ دکھانا پڑے گا، عطاء تارڑ

رہنما ن لیگ عطاء تارڑ کا کہنا ہے کہ بلاول بھٹو کے لہجے میں دن بدن تلخی آتی جا رہی ہے اور اگر وہ اپنے اس رویے سے باز نہ آئے تو پھر ہمیں ان کو آئینہ دکھانا پڑے گا۔
سماء کے پروگرام سوال میں گفتگوکرتے ہوئے عطاء تارڑ کا کہنا تھا کہ بلاول بھٹو شہید کے بیٹے ہیں اس لیے ان کا احترام کرتے ہیں لیکن جو الفاظ وہ مسلم لیگ ن کے لیے استعمال کر رہے ہیں ان کا ہمیں بھی آنے والے دنوں میں جواب دینا پڑے گا۔
عطاء تارڑ کا کہنا تھا کہ جیلوں کے حوالے سے ریکارڈ چیک کیا جائے کہ کون کس جرم میں جیل گیا ہے، نوازشریف تو یہ جانتے ہوئے بھی کہ بے بنیاد کیس ہے بیٹی کا ہاتھ پکڑ کر لندن سے آکر جیل گئے۔
انہوں نے کہا کہ آصف زرداری کے کیسز کو دیکھ کر تو لگتا ہے کہ ان کو تو ابھی کسی نے ہاتھ بھی نہیں لگایا۔
رہنما ن لیگ کا کہنا تھا کہ بھارت کو 72 سال میں کشمیر کی حیثیت بدلنے کی ہمت نہیں ہوئی مگر عمران خان کے آنے کے بعد کشمیرکی متنازع حیثیت تبدیل کر دی گئی۔
وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا کی شہبازشریف پر تنقید پر تبصرہ کرتے ہوئے عطاء تارڑ کا کہنا تھا کہ لیڈی ریڈنگ اسپتال میں کبھی آکسیجن کو آگ لگتی ہے تو کبھی خواتین سیڑھیوں پر بچوں کو جنم دیتی ہیں۔
عطاء تارڑ کا کہنا تھا کہ عمران خان اور ڈونلڈ ٹرمپ کے درمیان کشمیر سے متعلق کیا بات ہوئی تھی اس سے اب تک قوم کو آگاہ نہیں کیا گیا۔
پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے رہنما تحریک انصاف حلیم عادل شیخ کا کہنا تھا کہ مریم نواز کشمیر میں وہی باتیں کررہی ہیں جو انہوں نے گلگت بلتستان میں کی تھیں مگر عوام کو پتہ ہے کہ مودی کا کاروباری پارٹنر کون ہے۔
حلیم عادل شیخ کا کہنا تھا کہ ڈان لیکس میں مریم نواز نے جو کیا تھا وہ بھی قوم کو یاد ہے یہ صرف اپنی سیاسی بقاء کی جنگ لڑرہے ہیں۔
انہوں نے کہا کہ نوازشریف کا کشمیر سے متعلق کوئی وژن نہیں تھا بلکہ ان کی پرچیوں میں بھی کشمیر کا ذکر نہیں ہوتا تھا۔
رہنما تحریک انصاف کا کہنا تھا کہ ن لیگیوں کی سوچ بھٹی سے شروع ہوکر ملوں، میٹرو اور موٹروے پر حتم ہوجاتی ہے جبکہ عمران خان نے تو عالمی سطح پر کشمیر کا مقدمہ لڑا ہے۔
حلیم عادل شیخ کا کہنا تھا کہ کراچی میں بڑے نالے بنانے کا کام وفاق کررہا ہے جس کا ہم نے وعدہ کیا ہے مگر پی پی نے جن 41 نالوں کی صفائی کا وعدہ کیا تھا انہیں اب تک ہاتھ بھی نہیں لگایا۔
پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے رہنما پیپلزپارٹی شرمیلا فاروقی کا کہنا تھا کہ ہمارا ن لیگ کے ساتھ ایک ماضی رہا ہے اور اگر ہم کسی پلیٹ فارم پر بیٹھ بھی جائیں تو ہم ماضی سے جان نہیں چھڑا سکتے۔
شرمیلا فاروقی کا کہنا تھا کہ بھٹو سے لے کر فریال تالپور تک سب نے جیلیں کاٹی ہیں بے نظیر بھٹو ملک کی خاطر اولاد چھوڑ کر ملک واپس آئی تھیں۔
انہوں نے کہا کہ ن لیگ نے ہمیشہ ڈیل کرکے باہر جانے کو ترجیح دی ہے اور یہ ان کی روایت رہی ہے چاہے پرویز مشرف کا وقت ہو یا اس مرتبہ نوازشریف کا جیل کاٹنے کے بجائے باہر جانا ہو۔
مرتضیٰ وہاب کے ایڈمنسٹریٹر کراچی تقرری کے فیصلے سے متعلق شرمیلا فاروقی کا کہنا تھا کہ اگر کسی شخص کا تعلق کسی جماعت سے تو اس کا مطلب یہ نہیں کہ وہ اس منصب کا اہل نہیں۔
انہوں نے کہا کہ وفاقی حکومت کی کراچی پیکج کے اعلانات جھوٹ ثابت ہورہے ہیں اور اب تک انہوں نے کراچی کو ایک دھیلا بھی نہیں دیا۔



Source link

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

پاک امریکا وزرائے خارجہ رابطہ، افغان صورتحال پر گفتگو

پاک امریکا وزرائے خارجہ رابطہ، افغان صورتحال پر گفتگو

کراچی:زرد رنگ نالے کے بند مقام کا سراغ لگائے گا،شہری انتظامیہ

کراچی:زرد رنگ نالے کے بند مقام کا سراغ لگائے گا،شہری انتظامیہ