in

غیرقانونی طریقے سےشناختی کارڈ کااجرا،نادراافسران کیخلاف مقدمہ

غیرقانونی طریقے سےشناختی کارڈ کااجرا،نادراافسران کیخلاف مقدمہ

ایف آئی اے کے انسداد انسانی اسمگلنگ سرکل نے غیر قانونی طور پر قومی شناختی کارڈ جاری کرنے والے نادرا کے افسران کے خلاف مقدمہ درج کرکے تحقیقات شروع کردی ہیں۔

کراچی میں 8 جولائی بروز جمعرات میڈیا سے گفتگو میں ڈائريکٹر ايف آئی اے سندھ عامر فاروقی کا کہنا تھا کہ نادرا حکام کی ملکی بھگت سے دہشت گردوں اور غیر ملکی ایجنسیوں کیلئے قومی شناختی کارڈز بنانے کا انکشاف ہوا ہے۔ نادرا حکام اور ملازمین نے غیر ملکی ایجنسیوں کے ارکان اور دہشت گردوں کے شناختی کارڈ بنائے، جس میں افغان انٹیلی جنس این ڈی ایس اور القاعدہ کے اراکین شامل ہیں۔

عامر فاروقی نے یہ بھی انکشاف کیا کہ ملوث نادرا حکام ميں سے زيادہ تر کا تعلق سندھ سے ہے۔ غیر ملکیوں کے شناختی کارڈ بنوانے میں ڈپٹی ڈائریکٹر اور اسسٹنٹ ڈائریکٹر تک ملوث ہیں۔

دوسری جانب معامہ سامنے آنے پر ڈائریکٹر جنرل وفاقی تحقیقاتی اداره کی ہدایت کے مطابق کراچی میں جمعرات 8 جولائی کو نادرا اور غیر ملکی شہریوں کے خلاف قانونی کارروائی کے دوران انسداد انسانی اسمگلنگ سیل نے مطلوب 3 غیر ملکی شہریوں کو گرفتار کرکے ان کے خلاف مقدمہ درج کرلیا۔

غیر ملکی شہریوں نے نادرا افسران کیساتھ ملی بھگت سے پاکستانی شناختی حاصل کیے تھے۔

ایف آئی اے حکام کا کہنا ہے کہ ملزمان کے خلاف دہشت گردی ایکٹ اور نادرا قوانین کے تحت مقدمات درج کئے جائیں گے۔ درج مقدمے میں انسداد رشوت ستانی کی دفعات بھی شامل کی گئی ہیں۔ مقدمے میں نامزد افغان مہاجر بنام جمعہ خان ولد عبدل رحیم خان کو گرفتار کرلیا گیا ہے۔

درج مقدمات میں نادرا ملازمین و افسران کو بھی نامزد کیا گیا ہے جن کی گرفتاری جلد متوقع ہے۔ گرفتار ملزمان کو ریمانڈ کیلئے عدالت میں پیش کیا جائے گا۔



Source link

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

منشاءپاشا نے شادی کے بعدنام تبدیل نہ کرنیکی وجہ بتادی

منشاءپاشا نے شادی کے بعدنام تبدیل نہ کرنیکی وجہ بتادی

یمن: دکانوں پردستیاب خواتین کے زیریں لباس کےڈبے نذرآتش

یمن: دکانوں پردستیاب خواتین کے زیریں لباس کےڈبے نذرآتش