in

پائپ لائن پھٹنے پرغلط بیان، واٹربورڈ چیف انجینئر کی وضاحت

پائپ لائن پھٹنے پرغلط بیان، واٹربورڈ چیف انجینئر کی وضاحت

کراچی واٹر اینڈ سیوریج بورڈ کے میڈیا سیل نے جمعہ کو صفورا گوٹھ کے قریب کراچی یونیورسٹی میں پانی کی فراہمی کی بڑی لائن سے متعلق غلط معلومات جاری کیں۔

کراچی واٹر اینڈ سیوریج بورڈ کی معلومات کے مطابق پھٹنے والی لائن 84 انچ قطر کی تھی، جس سے ضلع وسطی کو بھی پانی فراہم کیا جاتا تھا۔

کے ڈبلیو ایس بی میڈیا سیل کا کہنا تھا کہ پانی کی لائن ضلع وسطی کو پانی کی فراہمی میں اضافے کیلئے پریشر بڑھانے کے باعث پھٹی۔

میڈیا سیل نے ایم ڈی اسد اللہ خان کے نام سے جاری خبر میں مزید کہا تھا کہ ضلع وسطی میں پانی کی فراہمی کیلئے پریشر بڑھانے کے باعث 84 انچ قطر کی لائن پھٹ گئی۔

جمعہ کو جاری پریس ریلیز میں یہ بھی کہا گیا تھا کہ پھٹنے والی لائن کی مرمت کا کام شروع کردیا گیا، مرمتی کام مکمل ہونے تک ضلع وسطی کے علاقوں میں پانی کی فراہمی معطل رہے گی۔

پانی کی سپلائی لائن جمعہکی دوپہر میں پھٹی تھی اور کراچی واٹر اینڈ سیوریج بورڈ کے منیجنگ ڈائریکٹر نے حکام کو جلد سے جلد مرمتی کام مکمل کرنے کی ہدایت کی تھی۔

لیکن دی گئی یہ تمام اطلاعات غلط تھیں۔

کراچی واٹر اینڈ سیوریج بورڈ کے چیف انجینئربلک واٹر سپلائی ظفر پلیجو نے اس حوالے سے مختلف معلومات کا تبادلہ کیا ہے۔ پلیجو وہ شخص ہیں جو لائن کے مرمتی کام کی نگرانی کرتے ہیں۔

سماء ڈیجیٹل سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ پھٹنے والی لائن 84 انچ قطر کی نہیں بلکہ 66 انچ قطر کی ہے، پائپ لائن کی مرمت کا کام ہفتہ کی دوپہر شروع کیا گیا۔



Source link

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

وفاقی بجٹ میں ایک ہزار سے 2100 سی سی تک نئی گاڑیوں پر کتنے ودہولڈنگ ٹیکس کی تجویز دی گئی ہے؟جانئے 

وفاقی بجٹ میں ایک ہزار سے 2100 سی سی تک نئی گاڑیوں پر کتنے ودہولڈنگ ٹیکس کی تجویز دی گئی ہے؟جانئے 

ایران سےغیرقانونی طور پرپاکستان آنیوالا امریکی گرفتار

ایران سےغیرقانونی طور پرپاکستان آنیوالا امریکی گرفتار