in

کےپی کے،گلگت بلتستان جانیوالےسیاحوں کیلئے خوشخبری،مفید معلومات

کےپی کے،گلگت بلتستان جانیوالےسیاحوں کیلئے خوشخبری،مفید معلومات

گلگت بلتستان اور خٰیبرپختونخوا حکومتوں نے این سی او سی کے ہدایت کی روشنی میں سیاحت دوبارہ کھول دی ہے اور اس حوالے سے سیاحوں کے لیے ایس او پیز بھی جاری کرتے ہوئے کچھ مفید اقدامات کرنے کا بھی فیصلہ کیا ہے۔
سماء ڈیجیٹل سے گفتگو کرتے ہوئے وزیرسیاحت گلگت بلتستان راجہ ناصرعلی خان نے بتایا کہ اب سیاح گلگت بلتستان کے تمام سیاحتی مقامات کی سیر کرسکتے ہیں تاہم ان کے لیے کرونا وائرس سے بچاؤ کی خاطر تمام ایس او پیز پر عمل کرنا لازمی ہوگا۔
راجہ ناصر علی خان کا کہنا تھا کہ بابو سرٹاپ کے راستے کو بھی 29 مئی تک کلیئر کیا جائے گا اور اس روڈ کے کھلنے سے ملک بھر سے مانسہرہ کے راستے گلگت آنے والوں کے سفر کا دورانیہ بھی کم ہوگا اور سیاح اس راستے میں مختلف تفریحی مقامات کا وزٹ بھی کرسکیں گے۔
یاد رہے کہ بابو سر ٹاپ شدید برف باری کے باعث سال کے تقریباً 6 سے 8 مہینے بند رہتا ہے۔ حکام کو توقع ہے کہ اس سڑک کے کھول دیے جانے کے بعد بڑی تعداد میں سیاح اس علاقے کا رخ کریں گے۔
وزیر سیاحت گلگت بلتستان کا کہنا تھا کہ شروع ہونے والی نئی ایئرلائنز انتظامیہ سے ایک ملاقات بدھ کے روز متوقع ہے اور امید ہے کہ ان کا فضائی آپریشن جون تک شروع ہوجائے گا۔
یاد رہے کہ سول ایوی ایشن اتھارٹی نے کچھ دن پہلے پاکستان میں ٹورازم کے فروغ کے لیے ایک نئی نجی ایئرلائن کو لائیسنس جاری کردیا تھا جو ملک کے دیگر شہروں سے گلگت، اسکردو،چترال اور گوادر کے درمیان پروازیں چلائے گی۔ جبکہ 2 دن قبل پاکستان انٹرنیشنل ایئرلاینز نے بھی تاریخ میں پہلی بار کراچی سے اسکردو پروازوں کا آغاز کردیا ہے ۔
راجہ ناصر علی خان کا کہنا تھا کہ اسکردو ائیرپورٹ سے بھی انٹرنیشل فلائیٹس کا آغاز کیا جا رہا ہے جس سے بیرونی ممالک سے آنے والے سیاحوں کو سہولت ہوگی اور انٹرنیشنل ٹورازم کو بھی تقویت ملے گی۔
وزیرسیاحت گلگت بلتستان کا کہنا تھا کہ انٹرنیشنل سیاحوں کو سیکیورٹی فراہم کرنے والی فورس کے اہلکاروں کے تنخواہوں کا مسئلہ بھی حل کرلیا گیا ہے اور ہماری پوری کوشش ہے کہ علاقے میں ملکی اور غیر ملکی سیاحوں کا بھرپور خیرمقدم کیا جائے اور سیاحوں کو بہترین سہولیات فراہم کیا جائیں۔
کرونا نیگٹیو سرٹیفکیٹ سے متعلق ان کا کہنا تھا کہ جن کے پاس کرونا نیگیٹو سرٹیفکیٹ موجود ہے اور جن کے لیے باآسانی ممکن ہو وہ سرٹیفکیٹ ضرور ساتھ رکھیں تاہم سرٹیفیکیٹ نہ ہونے کی وجہ سے کسی کو گلگت بلتسان میں داخل ہونے سے نہیں روکا جائے گا۔
دریں اثناء وزیراعلیٰ خیبر پختونخوا کے معاون خصوصی برائے اطلاعات کامران بنگش کا کہنا ہے کہ خیبرپختونخوا حکومت نے سیاحت پر پابندی ہٹادی ہے اور وہ تمام لوگ جو صوبے میں آنا چاہتے ہیں وہ شوق سے یہاں کا رخ کر سکتے ہیں۔
کامران بنگش نے سیاحوں سے کرونا ایس او پی پر عملدرآمد اور سیاحتی مقامات کی صفائی کا خیال رکھنے کی اپیل کی ہے تاکہ خود سیاح اور ان کے میزبان کرونا سے محفوظ رہ سکیں۔

سیاحوں کے لیے محکمہ سیاحت کی جاری کردہ ایس او پیز

دونوں صوبائی حکام نے سیاحوں اور ہوٹل عملے کو کرونا وائرس سے بچنے کے لیے ایس او پیز پر عملدرآمد لازمی قرار دیا ہے۔
ترجمان محکمہ صحت خیبر پختونخوا کے مطابق نئے ایس او پیز اور گائیڈ لائینز کا مقصد “محفوظ سیاحت” کو فروغ دینا ہے جبکہ کرونا ایس او پیز کے حوالے سے ریسکیو 1122، محکمہ صحت، ٹی ایم ایز، ہوٹل عملہ اور ٹور آپریٹرز کو پہلے ہی تربیت دی جا چکی ہے۔
ترجمان کے مطابق ہوٹل، گیسٹ ہاوسز، ریسٹورانٹ عملہ، ٹور آپریٹرز اور ٹور گائیڈز کرونا سے بچنے کا ویکسین لگوا چکے ہیں جبکہ ٹور آپریٹرز اور ہوٹل انتظامیہ کو سیاحوں کی بکنگ اور وزٹ معلومات سے متعلقہ اداروں کے آگاہ کرنے کا پابند بھی کیا گیا ہے۔
حکام نے ہوٹل انتظامیہ کو ہدایت کی ہے کرونا ویکسین لگائے بغیر 50 سال سے زائد عمر افراد کی بکنگ ہر گز نہ کی جائے جبکہ ماسک کے بغیر کسی بھی سیاح کو ہوٹل اور گیسٹ ہاؤس میں داخلے کی اجازت نہ دی جائے۔
ایک فرد کے لیے ایک کمرہ یا دو افراد بمع بچوں صرف ایک کمرہ الاٹ کرنے کی ہدایت کی گئی ہے جبکہ ہوٹل اور گیسٹ ہاؤسز کے ہر کمرے میں سینیٹائزر کی موجودگی بھی لازمی قرار دی گئی ہے۔
سڑک کنارے آباد ہوٹل اور فوڈ اسٹالز پر تمام عملہ ماسک لازمی پہنے گا اور وہاں ہاتھ دھونے کے لیے صاف پانی بمع صابن دستیاب ہوگا ،ہوٹل یا گیسٹ ہاؤس میں داخل ہوتے وقت جسم کا ٹمپریچر چیک کرانا بھی لازمی قرار دیا گیا ہے۔
ہوٹل اور ریسٹورانٹ کے عملے کا کرونا ایس او پیز سے متعلق تربیت یافتہ ہونا ضروری ہے جبکہ سیاحوں کی حفاظت کے لیے ہر انٹری پوائنٹ پر رہنما معلومات پر مبنی کتابچہ بھی فراہم کیا جانا ضروری ہوگا۔



Source link

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

پانی کی موجودہ تقسیم ‘سندھ دشمن‘ اقدام قرار

پانی کی موجودہ تقسیم ‘سندھ دشمن‘ اقدام قرار

ہنڈائی نشاط کی طرف سے بیچی جانے والی گاڑی ٹکسن صارفین سے کمپنی نے واپس منگو الیں بڑی خرابی کا انکشاف

ہنڈائی نشاط کی طرف سے بیچی جانے والی گاڑی ٹکسن صارفین سے کمپنی نے واپس منگو الیں بڑی خرابی کا انکشاف