in

پنجاب میں سخت پابندیوں کی وجہ سےکروناکیسزکی تعدادکم ہوئی،یاسمین راشد

پنجاب میں سخت پابندیوں کی وجہ سےکروناکیسزکی تعدادکم ہوئی،یاسمین راشد

وزیر صحت پنجاب ڈاکٹر یاسمین راشد کا کہنا ہے کہ صوبے میں ایس او پیز پر سختی سے عمل درآمد ہوا۔ سخت پابندیوں کی وجہ سے کرونا مریضوں کی تعداد کم ہوگئی۔ پہلی بار ہوا کہ روزانہ رپورٹ کیسز کی تعداد ایک ہزار سے کم ہوگئی۔

راول پنڈی میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے ڈاکٹر یاسمین راشد نے کہا کہ جتنے مریض اسپتالوں میں آرہے ہیں ان سے کہیں زیادہ صحت یاب ہو کر گھر جا رہے ہیں، مہینہ میں پہلے روزانہ کے چار ہزار کیسز آرہے ہیں ، آج کرونا کے 901 کیسز سامنے آئے ہیں ، ماسک پہننے سے 72 فیصد افراد وباء سے بچ جاتے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ پنجاب میں ہر قسم کی تجارتی سرگرمی رات 8 بجے کے بعد بند ہے۔ کھیلوں کی سرگرمیوں پر مکمل پابندی عائد ہے، پنجاب میں دو ہزار 818 بیڈز میں سے 1804 بیڈز زیر استعمال ہے ، 20ہزار 922 وینٹی لیٹرز بیڈ میں سے 550 زیر استعمال ہیں۔

راولپنڈی کا ذکر کرتے ہوئے وزیر صحت پنجاب نے کہا کہ راول پنڈی سے مریضوں کی شکایات نہیں آریں۔ راوپنڈی میں کرونا کی شرح 3٫5 فیصد ہو چکی ہے۔ راجن پور ، لیہ، اوکاڑہ، پاکتن میں کرونا پھیلاؤ کی شرح 8 فیصد سے کم ہوئی۔ ساہیوال، خانیوال، گجرات، ننکانہ، لودھراں میں بھی کرونا پھیلاؤ کی شرح 8 فیصد سے کم ہوئی ہے۔

وزیر صحت پنجاب نے بتایا کہ پبلک ٹرانسپورٹ 50 فیصد گنجائش کیساتھ چل رہی ہے۔ بھارت کے مقابلے میں پاکستان کی صورت حال بہتر ہے ، کھیلوں کی سرگرمیوں پر مکمل پابندی ہے۔ پنجاب میں 9500 لوگ کرونا کے باعث انتقال کر چکے ہیں۔ اگلے ہفتے مزید 8 ویکسی نیشن سینٹر قائم کئے جائیں گے



Source link

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

پاکستان کی معروف اداکارہ کے گھر بیٹے کی پیدائش خوشیاں آ گئیں 

پاکستان کی معروف اداکارہ کے گھر بیٹے کی پیدائش خوشیاں آ گئیں 

سارہ خان جڑواں بچوں کی خواہش مند

سارہ خان جڑواں بچوں کی خواہش مند