in

عثمان بزدار کو ناراض اراکین کا اعتماد حاصل ہے،فردوس عاشق اعوان

عثمان بزدار کو ناراض اراکین کا اعتماد حاصل ہے،فردوس عاشق اعوان

وزیراعلیٰ پنجاب کی معاون خصوصی فردوس عاشق اعوان نے وزیراعلیٰ پنجاب کو اراکین کا اعتماد حاصل نہ ہونے کے تاثر کو غلط قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ ناراض اراکین نے جمعہ کو عثمان بزدار سے ملاقات کی اور اپنے بھرپور اعتماد کا اظہار کیا۔

سماء کے پروگرام ایجنڈا 360 میں گفتگو کرتے ہوئے فردوس عاشق کا کہنا تھا کہ عوامی نمائندوں پر مہنگائی کے حوالے سے عوام کی جانب سے دباؤ ہے لیکن انہیں یہ سمجھنا ہوگا کہ یہ ایک عالمی مسئلہ ہے اور اس طرح کے مسائل اتحاد سے حل ہوتے ہیں۔

فردوس عاشق اعوان کا کہنا تھا کہ عمران خان کی قیادت پر کارکنوں کا اعتماد ہے، لیڈر کو ماننا بھی ہوتا ہے اور لیڈر کی بات بھی ماننی ہوتی ہے۔

انہوں نے کہا کہ سچ تو یہ ہے کہ مہنگائی اس حکومت کی سب سے بڑی مخالف ہے اور ہمارا مقابلہ اپوزیشن سے نہیں بلکہ مہنگائی اور بے روزگاری سے ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ معاشی استحکام کے لیے مظبوط حکومت ضروری ہے۔

فردوس عاشق اعوان کا کہنا تھا مسلم لیگ میں شاہی خاندان کے علاوہ ان کی نظر میں کوئی قیادت کا اہل نہیں۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ حکومت گرانے کا ان کا خواب بس خواب ہی رہےگا۔

پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے رہنما مسلم لیگ ن محمد زبیر کا کہنا تھا کہ میں نے اسٹیبلشمنٹ سے صلح والی کوئی بات نہیں کی تھی میں پہلے بھی نوازشریف کے بیانیے کے ساتھ تھا اور آج بھی ہوں۔

محمد زبیر کا کہنا تھا ملک میں 30 سال سے زائد عرصہ فوجی حکمران رہے ہیں جس کی وجہ سے سیاسی عمل میں ان کی مداخلت ہے اور ہماری ذمہ داری ہے کہ ہم اس کی نشاندہی کریں۔

انہوں نے کہا کہ پارٹی صدر شہبازشریف ہیں جن کی غیرموجودگی میں مریم نواز نے اپنا رول ادا کیا ورنہ پی ڈی ایم میں پارٹی کی نمائندگی شہبازشریف ہی کرتے۔

محمدزبیر کا کہنا تھا کہ شہبازشریف ایک سینئر سیاستدان ہیں اور ان رویہ ہمیشہ مفاہمانہ رہا ہے۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ ہم پر کارکنوں کا پریشر ہوتا ہے کہ ڈیل کے تاثر کو زائل کیا جائے۔



Source link

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

اسرائیل جنگ ہار چکا، وزیرخارجہ کا سی این این کوانٹرویو

اسرائیل جنگ ہار چکا، وزیرخارجہ کا سی این این کوانٹرویو

سندھ میں کاروباری سرگرمیوں کا شیڈول پھر تبدیل

سندھ میں کاروباری سرگرمیوں کا شیڈول پھر تبدیل