in

بھارت میں’لَو جہاد’کے نام پر نفرتیں پیدا کی جارہی ہیں

بھارتی اداکار نصیرالدین شاہ نے لو جہاد کے نام پر بھارت میں ہندوؤں اور مسلمانوں کے درمیان بٹوارے کی کوشش کی جا رہی ہے۔

بالی ووڈ اداکار نصیر الدین شاہ نے کاروان محبت نامی ڈیجیٹل میڈیا پلیٹ فام سے بات کرتے ہوئے کہا کہ بھارت میں بڑھتی مذہبی انتہا پسندی پر بات کرتے ہوئے کہا کہ اب اسی طرح انڈیا میں ‘لَو جہاد’ کے نام پر مسلمان و ہندووں کے درمیان نفرتیں پیدا کی جا رہی ہیں۔

نصیرالدین شاہ نے کہا کہ مجھے غصہ ہے اس بات پر جس طرح یوپی میں لو جہاد کے نام پر ہندوؤں اور مسلمانوں کے درمیان بٹوارے کی کوشش کی جا رہی ہے یہ ڈراما وہ لوگ رچا رہے ہیں جنہیں جہاد کے نام کا مطلب بھی معلوم نہیں۔

انہوں نے کہا کہ یہ لو جہاد کا جو تماشہ کیا گیا ہے، وہ صرف ہندو اور مسلمانوں کے سوشل انٹریکشن کو بند کرنے کیلئے تاکہ آپ شادی کی تو بات سوچے ہی نہیں،شادی تو بہت دور کی بات ہے، آپ کا آپس میں ملنا بھی ہم روک دیں گے

اداکار نے اپنی شادی کی مثال دیتے ہوئے کہا کہ ان کی اہلیہ رتنا پھاٹک ہندو ہیں اور جب وہ شادی کر رہے تھے تو والدہ نے ان سے پوچھا تھا کہ کیا وہ اہلیہ کا مذہب تبدیل کریں گے؟ جس پر انہوں نے والدہ کو بتایا تھا کہ وہ رتنا پھاٹک کا مذہب کیسے تبدیل کرسکتے ہیں، جس پر والدہ نے بھی تسلیم کیا کہ واقعی کوئی بھی کسی کا مذہب تبدیل نہیں کرسکتا۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ ماضی میں میرے دیئے گئے بیان کو غلط طریقے سے پیش کیا گیا ۔



Source link

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

’پہلے ہم ملیں گے پھر ہی تو گل کھلیں گے‘ عماد وسیم محمد عامر فہد مصطفی اور ہمایوں سعید کی مبینہ واٹس ایپ لیک سامنے آگئی

’پہلے ہم ملیں گے پھر ہی تو گل کھلیں گے‘ عماد وسیم محمد عامر فہد مصطفی اور ہمایوں سعید کی مبینہ واٹس ایپ لیک سامنے آگئی

پی ایس 52 عمرکوٹ: ضمنی انتخاب میں پیپلزپارٹی کامیاب

پی ایس 52 عمرکوٹ: ضمنی انتخاب میں پیپلزپارٹی کامیاب