in

واشنگٹن:کیپٹل ہل کے باہر حملہ آور نے گاڑی پولیس پر چڑ ھادی

واشنگٹن:کیپٹل ہل کے باہر حملہ آور نے گاڑی پولیس پر چڑ ھادی

واقعہ جمعہ کے روز پیش آیا۔ پولیس کی جانب سے سیکیورٹی چیک پوائنٹ سے ٹکرانے کے واقعے میں پولیس اہلکار اور مشتبہ حملہ آور کی ہلاکت کی تصدیق کردی گئی ہے۔

کیپیٹل پولیس ے مطابق ویڈیو میں دیکھا جا سکتا ہے کہ حملہ آور گاڑی ٹکرانے کے بعد ہاتھ میں خنجر لے کر پولیس آفیسرز کی طرف دوڑا اور اس نے ایک آفیسر پر خنجر سے وار کیا۔ جس کے بعد حملہ آور کو پولیس کی جانب سے ہتھیار ڈالنے کا کہا گیا، تاہم وہ ہدایت کو نظر انداز کرتے ہوئے دیگر اہل کاروں کی جانب لپکا تو پولیس کی طرف سے فائرنگ کی گئی، جس سے حملہ آور زخمی ہوگیا۔

پولیس کی جانب سے فوری طور پر زخمی حملہ آور کو اسپتال پہنچایا گیا، تاہم وہ زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے ہلاک ہوگیا۔

محکمہ پولیس کی جانب سے ہلاک افسر کی شناخت ظاہر کردی گئی ہے۔ پولیس آفیسر کا ولئیم بلی ایونز ہے۔ وہ 18سال سے امریکی کیپیٹل پولیس کے فرسٹ ریسپونڈر یونٹ کا حصہ تھے۔

پولیس کا کہنا ہے کہ فی الحال اسے دہشت گردی سے نہیں جوڑ سکتے ہیں۔ حملہ آور کے مقاصد کے بارے میں کچھ کہنا قبل از وقت ہے۔

واقعہ کیپیٹل ہل کے باہر کانسٹی ٹیوشن ایونیو پر امریکی سینیٹ کی عمارت کی جانب سیکیورٹی چیک پوائنٹ پر پیش آیا۔ اطلاعات کے مطابق، واشنگٹن کی میٹرو پولیٹین پولیس کا محکمہ ایف بی آئی کے واشنگٹن فیلڈ آفس کے ساتھ مل کر واقعے کی تحقیقات کر رہا ہے۔

یہاں یہ بات بھی قابل ذکر ہے کہ واقعہ کے بعد کیپیٹل ہل کے عمارت میں لاک ڈاؤن نافذ کر دیا گیا ہے، جب کہ عملے کو بھی عمارت کے باہر یا اندر جانے کی اجازت نہیں۔ کیپٹل ہل کے اس دروازے سے عملہ اور سینیٹرز کا گزر ہوتا ہے، تاہم چھی کی وجہ سے کانگریس کا دفتر بند تھا۔

قبل ازیں تین ماہ پہلے 6 جنوری کو بھی سابق امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے حامیوں نے بھی کیپٹل ہل کی عمارت پر حملہ کرکے اسے جزوی طور پر نقصان پہنچایا تھا۔

واقعہ کے بعد واشنگٹن ڈی سی میں دیگر فورسز کے ہمراہ نیشنل گارڈز کو تعینات کیا گیا تھا، جو ایک اندازے کے مطابق اب بھی تقریباً 2200 کی تعداد میں کیپٹل ہل کے اطراف میں سیکیورٹی امور پر تعینات ہیں۔



Source link

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Cyber-crime new

فنگرپرنٹ سے جعلی سمیں تیار کرنے والا 3رکنی گروہ گرفتار

استعفوں پر پی پی پی کی رائے کا احترام کرتے ہیں،رانا ثناء

استعفوں پر پی پی پی کی رائے کا احترام کرتے ہیں،رانا ثناء