in

کسانوں کو روکنے مودی حکومت نے کنکریٹ کی دیوار بنادی

کسانوں کو روکنے مودی حکومت نے کنکریٹ کی دیوار بنادی

مودی حکومت نے تاجروں کو دلی میں داخل ہونے سے روکنے کیلئے سڑک پر کنکریٹ کی موٹی دیوار تعمیر کردی جبکہ کسانوں نے ہفتے کو بھارت بھر میں پہیہ جام ہڑتال کا اعلان کردیا ہے۔

بھارتی کسان 26 نومبر سے نئے زرعی قوانین کے خلاف دلی کے باہر سڑک پر دھرنا دے کر بیٹھے ہیں۔ حکومت سے مذاکرات درجنوں مرتبہ ناکام ہوچکے ہیں۔ کسان ان قوانین کی مکمل واپسی کا مطالبہ کر رہے ہیں جبکہ مودی حکومت اس کیلئے تیار نہیں۔

بھارت کے یوم جمہوریہ یعنی 26 جنوری کو کسانوں نے احتجاج کے طور پر دلی میں ٹریکٹر پریڈ نکالی اور اس دوران لال قلعہ پر دھاوا بول کر سکھوں کا مذہنی پرچم ’نشان صاحب‘ لہرایا۔ پرتشدد واقعات کے دوران ایک کسان ہلاک بھی ہوگیا۔ کسانوں کی تنظیموں نے پرتشدد واقعات سے برات کا اعلان کرتے ہوئے الزام عائد کیا کہ حکومت نے پرامن احتجاج کو ناکام بنانے کیلئے اپنے بندے چھوڑے ہیں۔

اس پرتشدد احتجاج کے بعد حکومت نے کسانوں کو احتجاج ختم کرنے کا حکم دیا مگر وہ بدستور دھرنے کے مقامات پر موجود ہیں۔ کسانوں کا ایک دھرنا دلی کے سنگھو بارڈر پر جاری ہے جہاں سے ان کو دلی میں داخل ہونے سے روکنے کیلئے مودی حکومت نے کنکریٹ کی دیوار تعمیر کرنا شروع کردیا ہے۔



Source link

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

پاکستان اور عالمی مارکیٹ میں سونا مہنگا ہوگیا

پاکستان اور عالمی مارکیٹ میں سونا مہنگا ہوگیا

Imran Khan

ٹیلی فون پر گفتگو: وزیراعظم کا عوام کو صبر کامشورہ