in

ہٹلرکی تعریف پر فلسطینی خاتون صحافی کیخلاف تحقیقات

ہٹلرکی تعریف پر فلسطینی خاتون صحافی کیخلاف تحقیقات

عرب نیوز کی رپورٹ کے مطابق فلسطین میں بی بی سی سے وابستہ فلسطینی صحافی تالا حلاوہ نے 2014 میں ایک ٹویٹ کی تھی جس میں انہوں نے ’ہٹلر صحیح تھا‘ کے الفاظوں کا استعمال ہیش ٹیگ کے ساتھ کیا تھا۔

خاتون صحافی تالا حلاوہ کی ٹویٹ پر برطانوی نشریاتی ادارہ اس وقت تحقیقات کررہا ہے جبکہ غزہ میں اسرائیل کی بمباری کے نتجے میں 200سے زائد فلسطینی شہید ہوچکے ہیں جن میں 80سے زائد بچے اور خواتین شامل ہیں۔

دوسری جانب تالا حلاوہ نے یہ ٹویٹ 2014 میں تھی تاہم وہ اس وقت بی بی سی کے ساتھ منسلک نہیں تھیں۔

تالا حلاوہ نے 2014 کی اپنی ٹویٹ میں لکھا تھا کہ ’اسرائیل، ہٹلر سے بڑا نازی ہے! اوہ ہٹلر صحیح تھا۔ اسرائیلی ڈیفنس فورس (آئی ڈی ایف) جہنم میں جاؤ۔ غزہ کے لیے دعا کریں‘۔

اسرائیلی حملے میں تباہ میڈیابلڈنگ کامالک عالمی عدالت پہنچ گیا

خاتون صحافی بی بی سی میں فلسطین کی ماہر کے طور پر کام کرتی ہیں۔

بی بی سی کی صحافی نے غزہ میں حالیہ کشیدگی کی کوریج کی ہے اور انہوں نے فلسطین پر امریکی ماڈل بیلا حدید کی پوزیشن پر مضمون بھی لکھا ہے۔

تالا حلاوہ کی ٹویٹ ایک ایسے وقت میں سامنے آئی ہے جب چند روز پہلے ایسوسی ایٹڈ پریس نے سوشل میڈیا پالیسی کی خلاف ورزی کرنے پر ایمیلی وائلڈر کو نوکری سے برخاست کردیا تھا۔

ایمیلی وائلڈر نے اپنے ذاتی اکاؤنٹ سے فلسطین اور اسرائیل درمیان حالیہ کشیدگی میں فلسطینیوں اور غزہ میں رہنے والوں کے ساتھ یکجہتی کی ٹویٹس کی تھیں۔



Source link

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

دو دہائیوں بعد امریکہ کی حکمرانی ختم دنیا کا امیر ترین شخص کون بن گیا؟

دو دہائیوں بعد امریکہ کی حکمرانی ختم دنیا کا امیر ترین شخص کون بن گیا؟

ریکوڈک کیس: برطانوی عدالت نےپاکستان کےحق میں فیصلہ سنادیا

ریکوڈک کیس: برطانوی عدالت نےپاکستان کےحق میں فیصلہ سنادیا