in

بھارت: 100سالہ قدیم مسجد کو شہید کردیاگیا

بھارت: 100سالہ قدیم مسجد کو شہید کردیاگیا

الجزیرہ کی رپورٹ کےمطابق اترپردیش کے علاقے بارہ بنکی میں غریب نواز المعروف مسجد کی تعمیر برصغیر میں انگریز دور میں ہوئی تھی، جسے بھارت کی ریاستی حکومت نے آج بلڈوزر کے ذریعے منہدم کردیا۔ جبکہ اس اقدام پر مسلمانوں نے ہائی کورٹ جانے کا اعلان کردیا۔

گزشتہ شب ہزاروں بھارتی پولیس اہلکاروں نے مسجد کا محاصرہ کیا اور مسلمانوں کے احتجاج کو روکنے کےلیے علاقے میں کرفیو نافذ کردیا جبکہ لوگوں کو کھڑکی کھول کر باہر دیکھنے کی اجازت تک نہ دی گئی۔

بھارت کی سب سے گنجان آباد ریاست اترپردیش میں 2017 سے بی جے پی کی حکومت ہے اور ہندو انتہاپسند یوگی ادتیہ ناتھ وزیراعلیٰ ہے۔ ریاست کی آبادی 20 کروڑ ہے جس میں مسلمانوں کی تعداد 20 فیصد سے زیادہ ہے۔

بھارتی انتہاء پسندوں کے ہاتھوں ایک اور مسلمان قتل

دوسری جانب اترپردیش سنی مرکزی وقف بورڈ نے مسجد اور ریاست میں مسلمانوں کی دیگر املاک کو شہید کرنے کی مذمت کرتے ہوئے کہا کہ حکومت نے یہ کام کرکے عدالتی حکم کی خلاف ورزی کی ہے۔ عدالت نے 31 مئی تک اسٹے آرڈر جاری کر رکھا ہے۔ بورڈ نے اسے حکومت کی غیر قانونی سخت کارروائی قرار دیتے ہوئے اس کے خلاف عدالت سے رجوع کرنے کا اعلان کیا۔

مقامی رہائشی نوجوان سید فاروق احمد نے بتایا کہ انتظامیہ نے ایک ماہ قبل ہی مسجد میں نماز پر پابندی لگادی تھی اور دروازے پر دیوار بھی تعمیر کردی تھی جس کے خلاف لوگوں نے احتجاج کیا تو پولیس نے انہیں ڈرا دھمکا کر خوفزدہ کیا۔

حیران کن بات یہ ہے کہ مسجد کمیٹی کو شوکاز نوٹس دے کر کہا کہ یہ مسجد ایک سرکاری افسر کے گھر کے سامنے تعمیر کی گئی، حکومت کی جانب سے جو شوکاز نوٹس پلاٹ نمبر پر لکھا گیا ہے وہ مسجد کا تھا ہی نہیں جبکہ مسجد سڑک سے 100 فٹ دور ہے جس سے ٹریفک کی روانی میں کوئی خلل بھی واقع ہو۔



Source link

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

کروناوائرس کاپھیلاؤ روکنے کیلئے عائد پابندیوں میں نرمی کا فیصلہ

کروناوائرس کاپھیلاؤ روکنے کیلئے عائد پابندیوں میں نرمی کا فیصلہ

کیا اداکارہ صبا فیصل کے صاحبزادے سلمان فیصل کی اپنی بیوی سے علیحدگی ہوگئی؟

کیا اداکارہ صبا فیصل کے صاحبزادے سلمان فیصل کی اپنی بیوی سے علیحدگی ہوگئی؟