in

’ ایک نوجوان نے پہلے میرے چہرے پر ہاتھ پھیرا اور پھر مکا مار کر فرار ہوگیا‘ فاطمہ ثنا شیخ نے سرعام ہونے والی ہراسانی کا واقعہ سنا دیا

’ ایک نوجوان نے پہلے میرے چہرے پر ہاتھ پھیرا اور پھر مکا مار کر فرار ہوگیا‘ فاطمہ ثنا شیخ نے سرعام ہونے والی ہراسانی کا واقعہ سنا دیا

’ ایک نوجوان نے پہلے میرے چہرے پر ہاتھ پھیرا اور پھر مکا مار کر فرار ہوگیا‘ …

سورس:   Instagram/fatimasanashaikh

  

ممبئی(مانیٹرنگ ڈیسک)بھارتی اداکارہ فاطمہ ثناءشیخ نے حال ہی میں ایک انٹرویو کے دوران اپنے ساتھ ہونے والے جنسی ہراسگی کے ایک ایسے واقعے کے متعلق بتایا ہے کہ ہر سننے والا ملزم کی دیدہ دلیری اور بھارت میں خواتین کے خلاف جنسی جرائم کی صورتحال پر دنگ رہ جائے۔ ہندوستان ٹائمز کے مطابق فاطمہ ثناءشیخ نے بتایا کہ ایک روز میں جم سے گھر واپس جا رہی تھی کہ راستے میں ایک لڑکے نے مجھے گھورنا شروع کر دیا۔ میں نے اس سے پوچھا کہ کیوں گھو ررہے ہو؟ تو کہنے لگا کہ ”گھوروں گا، میری مرضی۔“

فاطمہ نے بتایا کہ ”میں نے اسے کہا کہ مار کھانی ہے کیا؟“ تو وہ چل کر میرے بالکل قریب آ گیا اور ’مار کے دکھا‘ کہتے ہوئے میرے چہرے پر ہاتھ پھیرنے لگا۔ اس پر میں نے اسے تھپڑ جڑ دیا اور جواب میں اس نے میرے منہ پر ایسا زور دار گھونسا دے مارا کہ میں ایک طرح سے بے ہوش ہو کر گر گئی۔ میں نے فوراً اپنے باپ کو فون کیا، وہ میرے بھائی اور اس کے دو تین دوستوں کے ساتھ وہاں پہنچا مگر تب تک وہ لڑکا وہاں سے فرار ہو گیا تھا۔ “ واضح رہے کہ فاطمہ ثناءشیخ بطور چائلڈ آرٹسٹ بالی ووڈ کی فلموں میں کام کرتی رہی ہیں۔ اس کے بعد انہوں نے چند سال توقف کے بعد ایک بار پھر فلم ’دنگل‘ کے ذریعے واپس انڈسٹری میں قدم رکھا۔ ان کی آئندہ فلم ”بھوت پولیس“ ہے جس کی شوٹنگ جاری ہے۔

مزید :

تفریح





Source link

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

ننھے بیٹے پر تشدد ویڈیو وائرل ہونے پر پولیس نے سنگدل باپ کو گرفتار کرلیا

ننھے بیٹے پر تشدد ویڈیو وائرل ہونے پر پولیس نے سنگدل باپ کو گرفتار کرلیا

ضلع جنوبی میں کارروائیاں، ٹیکسٹائل پلازہ سمیت 150دکانیں سیل

ضلع جنوبی میں کارروائیاں، ٹیکسٹائل پلازہ سمیت 150دکانیں سیل