in

اپنے بورڈنگ سکول میں سحر و افطار کے وقت بہترین کھانا ملتا تھاشمع سکندر

اپنے بورڈنگ سکول میں سحر و افطار کے وقت بہترین کھانا ملتا تھاشمع سکندر

اپنے بورڈنگ سکول میں سحر و افطار کے وقت بہترین کھانا ملتا تھا،شمع سکندر

ممبئی ( ڈیلی پاکستان آن لائن)معروف اداکارہ شمع سکندر نے کہا کہ ماہ رمضان میں میری بہترین یادیں بچپن کی ہیں ، مجھے یاد ہے جب ہم بورڈنگ سکول میں تھے تو ہمارے سر اس بات کا خاص خیال رکھتے تھے کہ ہمیں سحر و افطار میں بہترین کھانا ملے ۔

انگریزی جریدے ٹائمز آف انڈیا کے مطابق شمع سکندر نے اپنے بورڈنگ سکول میں گزارے ماہ رمضان کی یادیں تازہ کرتے ہوئے کہا کہ ہم میں سے جو روزے رکھتے تھے وہ مقررہ وقت پر جاگتے جبکہ راکھی بھائی اور بھوپندر ہمارے لئے کھانا بناتے ، مجھے امید ہے کہ وہ جہاں کہیں بھی ہوں گے یہ پڑھ رہے ہوں گے اور جان جائیں گے کہ ان کی یہ نیکی یاد ہے ، وہ اس بات کو یقینی بناتے کہ ہمیں بہترین کھانے کو ملے ۔ 

شمع سکندر نے کہا کہ ہم تمام بچے نیچے بیٹھ کر اکٹھے کھانا کھاتے تھے ، ان کے کھانے کا ہر لقمہ بہت لذیذ ہوتا تھا، اب زیادہ بورڈنگ سکولوں میں کھانا معیاری اور مزیدار نہیں ہوتا، لیکن ہمارے لئے ماہ رمضان میں خاص طور پر پکوان کا اہتمام کیا جاتا ، وہاں سب پیار محبت سے رہتے تھے جس سے ظاہر ہوتا ہے کہ ہم ایک نوع کی حیثیت سے کتنے پیارے ہیں اور مہربان ہیں ۔

شمع نے مزید کہا کہ ماہ رمضان میں لوگ اپنا وزن کم کرتے ہیں لیکن میرا وزن بڑھ جاتا تھا ، مجھے یاد ہے سحری میں بھرواں آلو پراٹھا آملیٹ اور ملائی مار کے گرم دودھ کیساتھ ملتا تھا۔کبھی کبھی والدین گھر سے کھانا بھجوا دیتے تو کبھی کسی کے گھر سے کچھ آجا تا ، اس طرح اور ہم پورے 30دن تک تمام کھانے انجوائے کرتے ۔

مزید :

تفریح





Source link

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

بروقت لاک ڈاؤن لگایا ہوتا تو کرونا روکا جا سکتا تھا،بلاول

بروقت لاک ڈاؤن لگایا ہوتا تو کرونا روکا جا سکتا تھا،بلاول

Sri Lanka muslim leader

ایسٹر سنڈے دھماکے: سری لنکا میں مسلم رکن پارلیمنٹ گرفتار