in

عورت مارچ کے بعض بینرز ضرورت سے زیادہ ہوتےہیں، متھیرا

عورت مارچ کے بعض بینرز ضرورت سے زیادہ ہوتےہیں، متھیرا

اداکارہ متھیرا نے کہا ہے کہ عورت مارچ کے بعض بینرز پر ان کو تحفظات ہیں لیکن وہ مجموعی طور پر اس مارچ کے حق میں ہیں۔

اداکارہ متھیرا نے انڈپینڈنٹ اردو کو دیئے گئے انٹرویو میں عورت مارچ کے حوالے سے کہا کہ میں زیادہ نہیں جانتی لیکن بہت سی خواتین جاتی ہیں تو ٹھیک ہے تاہم عورت مارچ کے بعض بینرز ضرورت سے زیادہ ہوتے ہیں ، فیمینزم کسی کا دل دکھانے کا نام نہیں۔

انہوں نے کہا کہ مجھے کبھی اس لیے ڈر نہیں لگا کیونکہ میں نے کسی کے پیسے نہیں کھائے، میں ملنگ عورت ہوں، میری دنیا ہی الگ ہے اور مجھے آگ سے کھیلنے کا شوق نہیں۔

ایک سوال کے جواب میں متھیرا نے کہا کہ کسی کو چھوٹے کپڑے پہننے پر دھمکیاں نہیں ملتیں، پاکستان پرانے خیالات کا ملک ضرور ہے مگر ایسا بھی نہیں۔ ان کا کہنا تھا کہ وہ کسی نظریے پر کام نہیں کرتیں، فلسفہ صرف کتابوں میں اچھا لگتا ہے۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ وہ بغاوت نہیں کرتیں، ان کے جیسے کپڑے بہت سی اداکارائیں پہنتی ہیں کپڑوں سے بغاوت نہیں ہوتی۔

حال ہی میں ناشپاتی پرائم ویڈیو کے ٹاک شو (ٹو بی آنیسٹ) میں میزبان تابش ہاشمی کو انٹرویو دیتے ہوئے اداکارہ متیرا کا کہنا تھا کہ مرد و خواتین میں برابری کی باتیں کرنا بے وقوفی ہے، دونوں کبھی بھی برابر نہیں ہو سکتے، کیوں کہ جو چیزیں مردوں کے پاس ہیں، وہ خواتین کے پاس نہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ انہوں نے کہا کہ ہم کافی چیزوں پر فوکس کرتے ہیں لیکن ہم انسانیت پر فوکس نہیں کرتےاگر انسانیت پر فوکس کریں تو سمجھیں رب راضی ہوگیا اللہ سب کے دل میں بستا ہے اس لیے کسی کا دل نہ دکھائیں۔



Source link

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

کیا آصف زرداری کیخلاف پرانے کیسز سراٹھائیں گے؟

کیا آصف زرداری کیخلاف پرانے کیسز سراٹھائیں گے؟

پاک سوزوکی 2سال بعد منافع میں

پاک سوزوکی 2سال بعد منافع میں