in

زویا ناصر سے منگنی ختم کرنے پر جرمن وی لاگر کی وضاحت

زویا ناصر سے منگنی ختم کرنے پر جرمن وی لاگر کی وضاحت

جرمن وی لاگر اور اداکارہ زویا ناصر کے سابقہ منگیتر کرسچین بیٹزمین کا کہنا ہے کہ انہوں نے زویا کو خود چھوڑا ہے۔

نومسلم جرمن وی لاگر کرسچین بیٹزمین کا پاکستانی اداکارہ و ماڈل زویا ناصر سے منگنی ٹوٹنے کے بعد سوشل میڈیا پر وضاحتی بیان جاری کرتے ہوئے کہا کہ سب سے پہلے تو یہ معافی نہیں ہے لیکن یہ حیرت کی بات ہے کہ لوگ کس طرح چیزوں کو مروڑ دیتے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ پاکستان نے کُھلے دل سے میرا استقبال کیا ہے اور میں اس کے لیے ہمیشہ مشکور رہوں گا، میں اپنے مداحوں سے محبت کرتا ہوں اور میں ان سب سے پیار کرتا ہوں جو گزشتہ ایک سال سے میری کامیابی میں میرا ساتھ دے رہے ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ میں نے کبھی کسی مذہب یا اس کے طریقہِ عبادت کی تضحیک نہیں کی۔ عبادت ایک خوبصورت عمل ہے، لیکن اگر حقیقت میں اس پر عمل پیرا نہیں تو وہ کسی کام کی نہیں،یہ صرف کہنے کی بات ہوتی ہے کہ سوشل میڈیا پر آپ کی رائے کی اہمیت نہیں۔

انہوں نے کہا کہ جیسا کہ میں نے بیان کیا، غلط بیانی کرنا اور انتشار پھیلانا بہت آسان ہوتا ہے جبکہ تبدیلی لانے کے لیے حل تلاش کرنا مشکل ہوتا ہے۔ میں ہمیشہ سے فلسطین، اور اپنے مسلمان بھائیوں کے ساتھ ہوں اور کسی بھی صورت اسرائیل کا حامی نہیں۔

جرمن وی لاگر نے کہا کہ مجھے اس ملک کی ثقافت کو اپنانا پڑا اور آپ نے مجھے قبول بھی کیا جبکہ انفراسٹرکچر کے لحاظ سے یہ ملک دنیا کا تیسرا ملک ہے اور اسے آلودگی کی وجہ سے بھی بہت زیادہ نقصان ہوتا ہے۔

اُن کا کہنا تھا کہ یہ اس ملک کے حقائق ہیں، اس کا مطلب یہ نہیں ہے کہ میں ملک سے یا اس کے عوام سے نفرت کرتا ہوں، یہ جھوٹ ہے۔ میں نے جو بیان دیے وہ صرف اس لیے کہا کہ میں پاکستان کی پرواہ کرتا ہوں اور واقعی میں ایک دن ایک تبدیلی دیکھنا چاہتا ہوں۔



Source link

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

نیب نے  484 ارب روپے کی ریکوری کی،بابراعوان

نیب نے 484 ارب روپے کی ریکوری کی،بابراعوان

سعودی بچی کی چیتے کے ساتھ ٹہلنے کی ویڈیو وائرل

سعودی بچی کی چیتے کے ساتھ ٹہلنے کی ویڈیو وائرل