in

ماں قتل اور 14 سالہ بیٹی گھر سے غائب پولیس نے معمہ حل کر لیا قاتل کون نکلا ؟ جان کر آپ کے ہوش گم ہو جائیں گے

ماں قتل اور 14 سالہ بیٹی گھر سے غائب پولیس نے معمہ حل کر لیا قاتل کون نکلا ؟ جان کر آپ کے ہوش گم ہو جائیں گے

ماں قتل اور 14 سالہ بیٹی گھر سے غائب، پولیس نے معمہ حل کر لیا ، قاتل کون نکلا ؟ …

صوابی (ڈیلی پاکستان آن لائن )خیبر پختون خواہ کے ضلع صوابی کے  علاقے کوٹھہ میں فون ضبط کرنے پر 14 سالہ لڑکی نے اپنی ماں کو ہی قتل کر دیا اور جواہرات چوری کرنے کے بعد فرار ہو گئی لیکن آخر کار پولیس نے معمہ حل کرتے ہوئے نوعمر لڑکی کو گرفتار کر لیا ہے ۔

تفصیلات کے مطابق ڈی ایس پی افتخار خان نے گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ صوابی میں دو فروری کو خاتون اپنے گھر پر مردہ حالت میں ملی تھی جبکہ اس کی 14 سالہ بیٹی گھر سے غائب تھی اور گھر کا سارا سامان بکھرا پڑا تھا ، سونا اور زیورات بھی غائب ہو چکے تھے ، کیس شروع سے ہی مسلح ڈکیتی کی طرف جا رہا تھا اور سب کچھ ویسا ہی ظاہر ہو رہا تھا ۔ہم نے خاتون بہار بی بی کے شوہر کے خلاف مقدمہ درج کرتے ہوئے تحقیقات کا آغاز کر دیا کیونکہ یہ واضح قتل کی واردات تھی ۔

انہوں نے کہا پولیس کی پہلی ترجیح اغواءہونے والی لڑکی کی بازیابی تھی جس کی عمر صرف 14 سے 15 سال کے درمیان تھی لیکن پولیس کے پاس کو ئی سراغ نہیں تھا جس کو سامنے رکھتے ہوئے تحقیقات کے رخ کا تعین کیا جاتاپھر ہم نے موبائل فون کی لوکیشن ٹریس کرنے سے آغاز کیا ۔جس سے معلوم ہوا کہ لڑکی مسلسل اپنے ارشد اقبال نامی کزن کے ساتھ رابطے میں تھی جو کہ راولپنڈی میں رہائش پذیر تھا ۔

ڈی ایس پی کا کہناتھا کہ ہم نے ٹیم کو راولپنڈی بھیجا اور ارشد کو حراست میں لیا ، لڑکی کے کزن کو گرفتار کرنا پولیس کی تحقیقات میں پہلی بڑی کامیابی تھی ،ارشد نے پولیس کو بتایا کہ اسے لڑکی کا فون آیا اور وہ کہنے لگی کہ اس نے گھر چھوڑ دیا ہے جس کے بعد وہ راولپنڈی سے فوری اسے اپنے ساتھ لے جانے کیلئے آیا ، لیکن جب لڑکی نے ارشد کو ساری کہانی کے بارے میں بتایا کہ اس نے اپنی ماں کو قتل کر دیاہے اور زیورات لے کر فرار ہو گئی ہے ، تو وہ چونک گیا ، لڑکے کی عمر کم تھی اس لیے وہ اس صورتحال سے ڈر گیا اور اس نے لڑکی کو نوشہرہ میں اس کی بہن کے گھر چھوڑا اور خود اکیلا راولپنڈی چلا گیا ۔

پولیس افسر کے مطابق لڑکی نوعمر ہے تاہم بعدازاں اسے گرفتار کر لیا گیا اور اس نے بتایا کہ وہ اپنے کزن کے ساتھ مسلسل رابطے میں تھی جس کا لڑکی کی ماں کو علم ہو گیا تھا اور اس نے اسے سمجھانے کی کوشش کی کہ تم ابھی بہت چھوٹی ہو اور تمہیں بیوقوف بنا کر اس نے تعلقات قائم کر لیے ہیں ۔ پولیس کے مطابق لڑکی کی والدہ نے موبائل ضبط کر لیا تاکہ وہ اس سے بات کرنا بند کردے اور یہ سزا کافی ہو گی ۔

لڑکی کی والدہ چاہتی تھیں کہ وقت گزر جائے اور ان کی بیٹی سمجھ جائے گی اور معاملہ ٹھنڈا ہو جائے گا لیکن فون ضبط کرنے پر لڑکی غصے میں پاگل ہو گئی ۔ بیٹی نے اپنے والد کا پستول اٹھایا اور والدہ کی کمر پر گولی مار دی اس کے بعد لڑکی نے تیز دار آلے سے ماں پر حملہ بھی کیا اور موت کے گھاٹ اتار دیا ۔قتل کرنے کے بعد لڑکی نے گھر سے تمام جواہرات اکھٹا کیے اور بھاگ گئی ، پھر اس نے اپنے کزن کو فون کیا کہ وہ اسے آ کر لے جائے ۔ 

مزید :

جرم و انصاف





Source link

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

ووٹ ہمیشہ کیلئے خفیہ نہیں رہ سکتا، سپریم کورٹ

ووٹ ہمیشہ کیلئے خفیہ نہیں رہ سکتا، سپریم کورٹ

ڈاکوؤں کی دیدہ دلیری10 منٹ میں ایک ہی علاقہ میں 2 میڈیکل سٹور لوٹ لیےپولیس خواب خرگوش کے مزے لیتی رہی

ڈاکوؤں کی دیدہ دلیری10 منٹ میں ایک ہی علاقہ میں 2 میڈیکل سٹور لوٹ لیےپولیس خواب خرگوش کے مزے لیتی رہی