in

 ایف آئی آرکے بغیرجیل میں 8سال گزارنے والا مسیحی نوجوان رہا 

 ایف آئی آرکے بغیرجیل میں 8سال گزارنے والا مسیحی نوجوان رہا 

 ایف آئی آرکے بغیرجیل میں 8سال گزارنے والا مسیحی نوجوان رہا 

پشاور(ڈیلی پاکستان آن لائن ) ہائی کورٹ نے  ایف آئی آرکےبغیر جیل میں 8سال گزارنے والے مسیحی نوجوان کو رہا کردیا۔

تفصیلا ت کے مطابق2013 میں ضلع خیبر(خیبر ایجنسی) سے گرفتار ہونے والے شکیل مسیح کے خلاف آٹھ سال کے دوران نہ کوئی مقدمہ درج ہوا اور نہ ہی کوئی گواہان یا ثبوت پیش کئے گئے۔ شکیل مسیح کی جانب سے مقدمہ لڑنے والے وکیل اور پشاور میں انسانی، سماجی و قیدیوں کے حقوق کے لیے سرگرم ہائی کورٹ کے وکیل سیف اللہ محب کا کا خیل کا کہنا ہے کہ عدالتوں میں فیصلے شواہد کی بنیاد پر کیے جاتے ہیں،اس مقدمے میں نہ تو ان کے موکل کے خلاف کوئی ایف آئی آر درج ہوئی نہ ہی واقعے کا گواہ کبھی عدالت میں پیش ہوا۔

کا کا خیل نے بتایا کہ کچھ عرصہ قبل خود کو صحافی کے طور پر متعارف کرانے والے ڈیوڈ روز نامی ایک شخص نے مجھ سے سوشل میڈیا کے ذریعے رابطہ کیا اور شکیل مسیح کا وکیل بننے کی استدعا کی۔ کیس کی نوعیت جاننے کے بعد انسانیت کی خاطرمیں نے بلامعاوضہ یہ کیس لڑنے کی پیشکش قبول کی۔

کاکا خیل کے مطابق انہوں نے عدالت کو درخواست دی کہ اس مقدمے کو شواہد اور گواہان کی روشنی میں چلایا جائے، جس کے بعد عدالت موجودہ نتائج پر پہنچ گئی۔

مزید :

قومیجرم و انصافعلاقائیخیبرپختون خواہپشاور



Source link

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

مفتی تقی عثمانی پر مبینہ حملہ،مقدمہ درج، اقدامِ قتل کی دفعہ شامل

مفتی تقی عثمانی پر مبینہ حملہ،مقدمہ درج، اقدامِ قتل کی دفعہ شامل

والٹن ائیرپورٹ کےتربیتی طیاروں کو8ہفتےتک پروازوں کی اجازت مل گئی

والٹن ائیرپورٹ کےتربیتی طیاروں کو8ہفتےتک پروازوں کی اجازت مل گئی