in

گزشتہ لاک ڈاؤن میں 15 سو مارکیٹوں میں تاجروں کو کتنا نقصان برداشت کرنا پڑا ؟ اسلام آباد چیمبر کےصدر نے اعدادو شمار پیش کرتےہوئے حکومت سے اپیل کردی 

گزشتہ لاک ڈاؤن میں 15 سو مارکیٹوں میں تاجروں کو کتنا نقصان برداشت کرنا پڑا ؟ اسلام آباد چیمبر کےصدر نے اعدادو شمار پیش کرتےہوئے حکومت سے اپیل کردی 

گزشتہ لاک ڈاؤن میں 15 سو مارکیٹوں میں تاجروں کو کتنا نقصان برداشت کرنا پڑا ؟ …

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)اسلام آباد چیمر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے صدر سردار یاسر الیاس خان نے کہا ہے کہ دو دن دوکانیں بند ہونے سے تاجروں کا بڑا نقصان ہوتا ہے ،گزشتہ لاک ڈاؤن میں 15 سو مارکیٹوں میں 42 ارب روپے کا نقصان ہوا تھا ،ہم کورونا سے نہیں بلکہ غربت سے مر جائیں گے ۔

میڈیاسےگفتگو کرتےہوئےسرداریاسرالیاس خان نے ہفتہ اور اتوار کوکاروباربندرکھنےکی مخالفت کرتےہوئےکہاکہ دو دن کارباربندرکھاتو تاجروں کو ناقابل تلافی نقصان ہوگا،تاجروں کومزید نقصان سے بچانے کےلئےیہ فیصلہ فوری واپس لیاجائے،وفاقی دارالحکومت میں ہفتےمیں دو دن کاروباربندرکھاجائےگاتو تاجروں کو مزید مسائل اور مشکلات کاسامناکرناپڑےگا جبکہ ملکی معیشت کوبھی نقصان ہوگا۔

انہوں نےکہاکہ ہمارے پاس ریلیف پیکج کےلئےفنڈزنہیں ہیں توپھرہمیں کاروبارتو کرنے دیں ،ایسی پالیسیز نہ لائی جائیں کہ معیشت مزید مشکل میں چلی جائے ، یکطرفہ پالیسیوں کی بجائےسٹیک ہولڈرزکو آن بورڈلیاجائے۔ انہوں نےکہاکہ کاروباری برادری کوروناایس او پیز پرمکمل عملدرآمدکرنےکےلئے انتظامیہ سے مکمل تعاون کرنے کے لئے تیار ہے۔

مزید :

بزنس





Source link

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

کرونا ویکسین کی قیمت مقرر کرنے کیلئے ڈریپ کا میکنیزم تیار

کرونا ویکسین کی قیمت مقرر کرنے کیلئے ڈریپ کا میکنیزم تیار

پنجاب حکومت کی کچھ شہروں میں اتوار کو مارکیٹس کھولنے کی اجازت

پنجاب حکومت کی کچھ شہروں میں اتوار کو مارکیٹس کھولنے کی اجازت