in

کیا پاکستان میں سستی الیکٹرک گاڑیاں آرہی ہیں؟

کیا پاکستان میں سستی الیکٹرک گاڑیاں آرہی ہیں؟

یہاں یہ بات بھی قابل ذکر ہے کہ حکومت پاکستان کی جانب سے گلوبل وارمنگ اور ماحولیاتی تبدیلوں کے مسائل سے نبرد آزما ہونے اور ملک کو کلین گرین بنانے کیلئے سال 2030 کے آخر تک ملک میں 30 فیصد الیکٹرک گاڑیاں لانے کا بھی اعلان کیا گیا تھا۔ یہ ہی وجہ ہے کہ وہ کمپنیاں جو الیکٹرک گاڑیاں متعارف کرانا چاہتی ہیں ان کیلئے حکومت ایسی مراعات کا بھی اعلان کیا گیا ہے، جس میں ٹیکس اور ڈیوٹیسز میں چھوٹ دی جائے گی۔

شوکت قریشی نے یہ بھی بتایا کہ یہ الیکٹرک گاڑیاں پہلے ہی پاکستان آجاتی تاہم کرونا وائرس کے باعث شپمنٹ میں تاخیر ہوئی، مگر اب گاڑیوں کی پہلی کھیپ 20 دنوں میں پاکستان آجائے گی۔ جب کہ دوسری کھیپ اگلے ماہ تک پاکستان پہنچ جائے گی۔

تاہم سی او او نے گاڑیوں کو متعارف کرانے والی چینی کمپنی کا نام بتانے سے گریز کیا۔ شوکت قریشی کے مطابق یہ چینی کمپنی دیگر 34 ممالک میں بھی گاڑیاں برآمد کر رہی ہے۔

واضح رہے کہ الیکٹرک گاڑیوں کی برآمد اس سے پہلی ٹیکس اور ڈیوٹیز کی مد میں دی جانے والی بھاری ادائیگیوں کے باعث مشکل تھی، تاہم حکومتی اعلان اور ٹیکس اور ڈیوٹیز میں 10 سے 25 فیصد چھوٹ کے بعد اب پاکستان میں الیکٹرک گاڑیاں برآمد کرنا آسان بنا دیا گیا ہے۔

حکومت کی جانب سے صرف مکمل سی بی یو الیکٹرک گاڑیوں کو ہی برآمد کرنے کی اجازت دی گئی ہے، جس کیلئے صرف10 فیصد ڈیوٹی ایک سال کیلئے ادا کرنی ہوگی، تاہم اس کے بعد ایک سال مکمل ہونے پر  اس ڈیوٹی میں اضافہ ہوجائے گا۔ تاکہ مکمل گاڑیوں کی برآمد کو روک کر ملک میں مقامی طور پر ان کی تیاری کو ترجیح دی جا سکے اور یہ گاڑیاں مقامی طور پر بنائی جا سکے۔

الیکٹرک گاڑیوں پر حکومت کی جانب سے 1 فیصد ٹیکس کم کیا گیا ہے، جب کہ الیکٹرک گاڑیوں کے پارٹس پر بھی کسٹم ڈیوٹی 1 فیصد کم کی گئی ہے۔

کمپنی کی جانب سے یہ بھی امکان ظاہر کیا گیا ہے کہ جب یہ گاڑیاں مقامی طور پر تیار ہونگی اور ان کے اوپر کم لاگت کے ٹیکس اور ڈیوٹی ادا ہوگی تو آنے والے دنوں میں ان کی قیمت بھی مزید کم ہوگی۔

الیکٹرک گاڑیوں کیلئے 8 سال کی وارنٹی دی جائے گی، جب کہ ان کی خود 3 سال کی وارنٹی ہوگی، ان گاڑیوں میں لیتھیئم بیٹریاں ہونگی۔

سیلز اور مارکٹنگ ڈائریکٹر اعجاز حسین کے مطابق گاڑیوں میں 2 طرح کی بیٹریاں ہونگی، ایک بیٹری کی صلاحیت 7.5 کلو واٹ فی گھنٹہ جب کہ دوسری کی 10 کلو واٹ فی گھنٹہ ہوگی۔ گاڑیوں کی رفتار 70 کلو میٹر فی گھنٹہ ہوگی جو 260 کلو میٹر سے 300 کلو میٹر میں مکمل چارج کیساتھ چلے گی۔



Source link

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

چار سال تک وزیر خارجہ تعینات نہ کرنے والے کس منہ سے خارجہ پالیسی کی بات کرتے ہیں۔۔ ملیکہ بخاری نے مریم نواز کو کھری کھر ی سنادیں

چار سال تک وزیر خارجہ تعینات نہ کرنے والے کس منہ سے خارجہ پالیسی کی بات کرتے ہیں۔۔ ملیکہ بخاری نے مریم نواز کو کھری کھر ی سنادیں

بجلی کی تاریں ٹھیک کرتے کرنٹ لگنے سے لیسکو ملازم جان کی بازی ہارگیا

بجلی کی تاریں ٹھیک کرتے کرنٹ لگنے سے لیسکو ملازم جان کی بازی ہارگیا