in

سندھ کا مالی سال 22-2021 کا بجٹ پیش سرکاری ملازمین کی تنخواہوں میں ناقابل یقین اضافہ

سندھ کا مالی سال 22-2021 کا بجٹ پیش سرکاری ملازمین کی تنخواہوں میں ناقابل یقین اضافہ

سندھ کا مالی سال 22-2021 کا بجٹ پیش ، سرکاری ملازمین کی تنخواہوں میں ناقابل یقین …

کراچی ( ڈیلی پاکستان آن لائن) وزیر اعلیٰ سندھ نے سندھ کا آئندہ مالی سال کیلئے 14کھرب 78 ارب روپے کا بجٹ پیش کر دیا ، بجٹ میں سرکاری ملازمین کی تنخواہوں میں 20 فیصد اضافہ کر دیا گیا ۔ وزیر اعلیٰ سندھ نے کہا کہ  نئے بجٹ میں کوئی نیا ٹیکس نہیں لگایا گیا ۔

وزیر اعلیٰ سندھ نے اپوزیشن کے شدید شور شرابے میں سندھ کے مالی سال 22-2021 کا بجٹ پیش کیا ، 14 کھرب 78 ارب روپے کے بجٹ میں آئندہ مالی سال کے دوران ترقیاتی اخراجات میں 41.3 فیصد کا اضافہ کیا ہے۔ صوبائی اے پی ڈی میں 43.5 فیصد اضافہ کیا گیا، آئندہ مالی سال میں ضلعی اے پی ڈی میں 100 فیصد اضافہ کیا گیا ہے۔

وزیر اعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ نے کہا کہ آئندہ مالی سال میں  زراعت کے شعبے کی بحالی کیلئے تین ارب روپے مختص کئے ، شہریوں کی فلاح و بہبو کیلئے 16 ارب روپے رکھے گئے ،  تعلیم کیلئے 3.20 ارب روپے رکھے ہیں ۔ آئندہ مالی سال میں آئی ٹی سیکٹر کی بحالی کیلئے 1.70 ارب روپے مختص کئے جائیں گے ۔  کم لاگت ہاؤسنگ سکیم کیلئے دو ارب روپے مختص کئے گئے ہیں ۔

سید مراد علی شاہ نے بجٹ تقریر میں کہا کہ  ترقیاتی اخراجات میں 41.3 فیصد اضافہ کر دیا گیا،  فلاحی منصوبوں کیلئے 239 ارب روپے ، صوبائی اے ڈی پی کیلئے 22 ارب 50 کروڑ روپے مختص کئے گئے  ہیں ، صوبائی بجٹ میں 19.1 فیصد اضافہ ہوا۔  آئندہ مالی سال میں صحت کیلئے 172.08 ارب روپے رکھے گئے  ہیں ، آئندہ مالی سال میں صحت کیلئے بجٹ میں 29.5 فیصد کا اضافہ کیا گیا ہے ، وبائی امراض کا مقابلہ کرنے کیلئے 24.73 ارب روپے مختص کئے ، صحت کیلئے ترقیاتی بجٹ میں 18.50 ارب روپے رکھے گئے ۔صوبے میں امن و امان کو برقرار رکھنے کیلئے 119.97 ارب روپے مختص کئے گئے ہیں۔

مزید :

بجٹبزنس





Source link

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

مال نہیں اعمال پر توجہ دیںشہباز شریف کا حکومت کو مشورہ 

مال نہیں اعمال پر توجہ دیںشہباز شریف کا حکومت کو مشورہ 

ڈالر 3ماہ کی بلندترین سطح پر، آج کے کرنسی ریٹ

ڈالر 3ماہ کی بلندترین سطح پر، آج کے کرنسی ریٹ