in

ایمنسٹی اسکیم میں توسیع آرڈیننس:سرمایہ کاری پرذرائع آمدن نہیں بتانی ہوگی

تعمیراتی شعبے کیلئے ایمنسٹی اسکیم میں توسیع کا آرڈیننس جاری کردیا گیا۔ سرمایہ کاری پر ذریعہ آمدن نہیں پوچھاجائےگا۔ بلڈرز اور ڈیویلپرز کے ساتھ ساتھ خریداروں کو بھی سہولت ملےگی۔

تعمیراتی شعبے کیلئے ایمنسٹی اسکیم میں توسیع کا آرڈیننس جاری کردیا گیا۔ سرمایہ کاری پر ذریعہ آمدن نہیں پوچھاجائےگا۔ بلڈرز اور ڈیویلپرز کے ساتھ ساتھ خریداروں کو بھی سہولت ملےگی۔

حکومت نےسرمایہ کاری پرذرائع آمدن بتانے کی چھوٹ میں 30 جون 2021 تک توسیع کردی ہے۔صدر مملکت نے تعمیراتی شعبے کیلئےانکم ٹیکس ترمیمی آرڈیننس 2021 جاری کردیا ہے۔وزیراعظم نے 31 دسمبر 2020کو اسکیم میں 6 ماہ کی توسیع کا اعلان کیا تھا۔

آرڈینس کی منظوری سےپراپرٹی سےحاصل آمدن پر فکسڈ ٹیکس اسکیم سے فائدہ اٹھانے کی ڈیڈ لائن 31 دسمبر تک بڑھادی گئی ہے۔ تعمیراتی منصوبوں کی تکمیل کی آخری تاریخ میں بھی ایک سال کا اضافہ کردیا گیا ہے اورمنصوبہ 30 ستمبر 2022 کےبجائے 30 ستمبر 2023 تک مکمل کرنا ہوگا۔

ترمیمی آرڈیننس کے تحت ہاؤسنگ یونٹس یا پلاٹ کی خریداری کرنے والوں کو بھی ذرائع آمدن کی چھوٹ میں مزید 6 ماہ کی چھوٹ دی گئی ہے۔تعمیراتی شعبے میں سرمایہ کاری پر ٹیکس دہندگان کو الیکٹرانک نوٹسزبھی جاری نہیں ہوسکیں گے۔بلڈرز یا ڈیویلپرز ایف بی آر کی ویب سائٹ کےذریعے31 دسمبر تک منصوبہ رجسٹر کرا سکیں گے۔ایف بی آر کے مطابق کھربوں روپے مالیت کے منصوبے پائپ لائن میں ہیں۔



Source link

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

تعلیمی ادارےامتحانات جلدبازی میں نہیں لیں گے،سعیدغنی

تعلیمی ادارےامتحانات جلدبازی میں نہیں لیں گے،سعیدغنی

نئی آٹو پالیسی کی توجہ سستی گاڑیوں پر مرکوز