in

بجلی ٹیرف میں اضافےکا آئی ایم ایف مطالبہ ناجائزہے، وزیرخزانہ

Shaukat-Tareen_

وزیر خزانہ شوکت ترین نے کہا کہ ٹیرف بڑھانے سے آئے روز مہنگائی کی شرح میں اضافہ ہو رہا ہے اور اس پر آئی ایم ایف سے بات کرنا انتہائی ضروری ہے۔

قومی اسمبلی کی قائمہ کمیٹی خزانہ کا فیض اللہ کی زیر صدارت اجلاس ہوا جس میں قائمہ کمیٹی خزانہ کو ملکی معاشی صورتحال پر بریفنگ میں وزیر خزانہ نے آئی ایم ایف پروگرام پر نظرثانی کا عندیہ بھی دیا۔

وزیر خزانہ نے کہا کہ معیشت کا پہیہ چل نہیں رہا اور ٹیرف بڑھانے سے کرپشن بڑھ رہی ہے۔ آئی ایم ایف نے پاکستان کے ساتھ زیادتی کی۔

جی ڈی پی گروتھ پانچ فیصد تک نہ لے کر گئے تو آئندہ چار سال تک ملک کا اللہ حافظ ہے، وزیر خزانہ

انہوں نے کہا کہ آئی ایم ایف کو سمجھانے کی کوشش کر رہا ہوں اور آئی ایم ایف سے کہا کہ گردشی قرضہ کم کریں گے لیکن ٹیرف بڑھانا سمجھ سے باہر ہے۔

شوکت ترین کو وزیر خزانہ بنا دیا گیا

وزیر خزانہ نے کہا کہ معیشت کی بحالی اور استحکام کیلئے سخت فیصلے کرنا ہوں گے۔ گزشتہ دو ماہ سے محصولات میں اضافہ ہو رہا ہے اس لیے نئے ٹیکسز کی بجائے ٹیکس نیٹ بڑھانے کی ضرورت ہے۔

شوکت ترین نے کہا کہ ہمارے ملک میں شارٹ، میڈیم اور لانگ ٹرم معاشی پالیسی نہیں جبکہ چین، ترکی اور بھارت نے معاشی پالیسیوں میں تسلسل رکھا۔ زراعت، صنعت، پرائس کنٹرول اور ہاوسنگ سیکٹر میں بہتری کی ضرورت ہے۔

انہوں نے بریفنگ میں بتایا کہ صرف اعشاریہ 25 فیصد ہاؤسنگ مارگیج ہے لیکن ہاؤسنگ سیکٹر کی بحالی سے 20 دوسری صنعتوں کا پہیہ چلے گا۔ صحت اور تعلیم کے لیے بہت کم خرچ کیا جاتا ہے، تمام صوبوں کے محاصل کا 85 فیصد ملک کے 9 بڑے شہروں پر خرچ ہوتا ہے۔

 شوکت ترین نے بتایا کہ ڈیٹ مینجمنٹ کی ری پروفائلنگ کی ہے۔ حکومت جن اداروں کو نہیں چلا سکتی ان کی نجکاری کر دی جائے گی، غریب طبقے کو اشیائے ضروریہ پر ٹارگٹڈ سبسڈی دینے کا پلان ہے۔



Source link

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

LPG gas cylinder

ایل پی جی کی قیمت میں 23روپے فی کلو کمی

Flour

ملتان: ذخیرہ اندوزوں کیخلاف کارروائی، 50ہزار بوری گندم برآمد